Sunday , September 23 2018
Home / دنیا / فلسطینی مملکت کو تسلیم کرنے پر سویڈن کے سفیر کی حکومت اسرائیل کی جانب سے طلبی

فلسطینی مملکت کو تسلیم کرنے پر سویڈن کے سفیر کی حکومت اسرائیل کی جانب سے طلبی

روشلم۔ 5؍اکٹوبر (سیاست ڈاٹ کام)۔ نومنتخبہ وزیراعظم سویڈن اسٹیفن لافوین کی جانب سے مملکت فلسطین کو تسلیم کرنے کے اعلان پر برہم اسرائیل نے کہا کہ وہ سویڈن کے سفیر برائے اسرائیل کو طلب کرکے اس ’بدبختانہ‘ اقدام کے خلاف احتجاج کرے گا۔ وزیر خارجہ اسرائیل اویگڈور لیبرمین نے کہا کہ وزیراعظم سویڈن لافوین کو یہ سمجھنا ضروری ہے کہ کوئی بھی

روشلم۔ 5؍اکٹوبر (سیاست ڈاٹ کام)۔ نومنتخبہ وزیراعظم سویڈن اسٹیفن لافوین کی جانب سے مملکت فلسطین کو تسلیم کرنے کے اعلان پر برہم اسرائیل نے کہا کہ وہ سویڈن کے سفیر برائے اسرائیل کو طلب کرکے اس ’بدبختانہ‘ اقدام کے خلاف احتجاج کرے گا۔ وزیر خارجہ اسرائیل اویگڈور لیبرمین نے کہا کہ وزیراعظم سویڈن لافوین کو یہ سمجھنا ضروری ہے کہ کوئی بھی اعلامیہ یا کوئی بھی اقدام کسی بھی بیرونی ملک کی جانب سے فریقین کے درمیان راست سودے بازی اور مسئلہ کی جامع معاہدے کے ذریعہ یکسوئی تک نہیں کیا جاسکتا۔ اسرائیل اور عالم عرب کے درمیان فلسطین کے بارے میں کوئی بھی معاہدہ ضروری ہے۔ اس کے بعد ہی مملکت فلسطین کو تسلیم کیا جاسکتا ہے۔ اس سے پہلے اس قسم کا اقدام ’بدبختانہ‘ قرار دیا جائے گا۔ ذرائع کے بموجب اسرائیل نے سویڈن کے اقدام پر فکرمندی ظاہر کی ہے اور کہا ہے کہ یہ تشویش ناک سفارتی اقدام ہے۔

TOPPOPULARRECENT