Tuesday , September 25 2018
Home / ہندوستان / فلم ’’پی کے‘‘ میں کوئی دلآزار بات نہیں: دہلی ہائیکورٹ

فلم ’’پی کے‘‘ میں کوئی دلآزار بات نہیں: دہلی ہائیکورٹ

نئی دہلی 7 جنوری (سیاست ڈاٹ کام) دہلی ہائیکورٹ نے کہاکہ عامر خان کی فلم ’’پی کے‘‘ میں کوئی دل آزار بات نہیں ہے۔ اِس پر عائد الزامات کی کوئی بنیاد نہیں ہے کہ اِس کی وجہ سے ہندو ثقافت اور مذہبی رسومات بدنام ہورہی ہیں۔ دہلی ہائیکورٹ کی ایک بنچ نے جو چیف جسٹس جی روہنی اور جسٹس بی ایس اینڈلا پر مشتمل تھی، کہاکہ اِس فلم میں کوئی غلط بات ن

نئی دہلی 7 جنوری (سیاست ڈاٹ کام) دہلی ہائیکورٹ نے کہاکہ عامر خان کی فلم ’’پی کے‘‘ میں کوئی دل آزار بات نہیں ہے۔ اِس پر عائد الزامات کی کوئی بنیاد نہیں ہے کہ اِس کی وجہ سے ہندو ثقافت اور مذہبی رسومات بدنام ہورہی ہیں۔ دہلی ہائیکورٹ کی ایک بنچ نے جو چیف جسٹس جی روہنی اور جسٹس بی ایس اینڈلا پر مشتمل تھی، کہاکہ اِس فلم میں کوئی غلط بات نہیں ہے جلد اِس کی خوبیوں اور خامیوں کے بارے میں تفصیلی حکم جاری کیا جائے گا۔ بنچ نے سوال کیاکہ فلم میں کیا خرابی ہے۔ آپ ہر چیز کا بُرا کیوں مانتے ہیں۔ ہمیں الزامات کی کوئی بنیاد نظر نہیں آئی جو درخواست میں عائد کئے گئے ہیں۔ فلم کی خوبیوں اور خامیوں کے بارے میں جلد ہی حکمنامہ جاری کیا جائے گا۔ مقدمہ کی سماعت کے دوران ایڈیشنل سالیسٹر جنرل سنے جین نے عدالت سے کہاکہ ایسی ہی ایک درخواست سپریم کورٹ نے مسترد کردی ہے۔

TOPPOPULARRECENT