Tuesday , June 19 2018
Home / پاکستان / فنی خرابی سے ہیلی کاپٹر حادثہ ‘ مار گرانے طالبان کا ادعا مسترد

فنی خرابی سے ہیلی کاپٹر حادثہ ‘ مار گرانے طالبان کا ادعا مسترد

اسلام آباد 9 مئی ( سیاست ڈاٹ کام ) پاکستان نے آج کہا کہ مقبوضہ کشمیر میں جو ہیلی کاپٹر حادثہ کا شکار ہوا تھا وہ فنی خرابی کی وجہ سے لینڈنگ سے عین قبل بے قابو ہوگیا تھا ۔ اس حادثہ میں سات افراد ہلاک ہوگئے تھے جن میں دو بیرونی سفارتکار بھی شامل تھے ۔ حکومت نے طالبان کی جانب سے اس ہیلی کاپٹر کو مار گرائے جانے کے ادعا کو مسترد کردیا ہے ۔ ائ

اسلام آباد 9 مئی ( سیاست ڈاٹ کام ) پاکستان نے آج کہا کہ مقبوضہ کشمیر میں جو ہیلی کاپٹر حادثہ کا شکار ہوا تھا وہ فنی خرابی کی وجہ سے لینڈنگ سے عین قبل بے قابو ہوگیا تھا ۔ اس حادثہ میں سات افراد ہلاک ہوگئے تھے جن میں دو بیرونی سفارتکار بھی شامل تھے ۔ حکومت نے طالبان کی جانب سے اس ہیلی کاپٹر کو مار گرائے جانے کے ادعا کو مسترد کردیا ہے ۔ ائر چیف مارشل سہیل امان نے سرکاری ٹی وی کو بتایا کہ یہ ہیلی کاپٹر پوری طرح پرواز کے قابل تھا اور لینڈنگ سے قبل تک بھی وہ معمول کے مطابق تھا تاہم یہ اچانک بے قابو ہوگیا تھا ۔ انہوں نے کہا کہ ہمارے بیس کمانڈر اس ہیلی کاپٹر پر نظر رکھے ہوئے تھے اور اس کی پرواز میں کوئی مسئلہ نہیں تھا ۔ اس حادثہ میں فلپائن اور ناروے کے سفیر اور ملیشیائی و انڈونیشیائی سفیروں کی شریک حیات پرواز کر رہے تھیںجو ہلاک ہوگئیں ۔ جملہ سات افراد اس حادثہ میں ہلاک ہوگئے تھے ۔ یہ حادثہ پاکستان مقبوضہ کشمیر کے گلگت ۔ بالٹستان علاقہ میں پیش آیا تھا ۔ اس میں جملہ 19 افراد سوار تھے ۔ طالبان نے اس ہیلی کاپٹر کو مار گرانے کا ادعا کیا تھا اور کہا تھا کہ وزیر اعظم نواز شریف ان کا اصل نشانہ تھے ۔ اس دوران ہیلی کاپٹر حادثہ میں مرنے والوں بشمول ناروے اور فلپائن کے سفیروں اور انڈونیشیائی و ملیشیائی سفیروں کی شریک حیات کی نعشیں آج حادثہ کے مقام سے اسلام آباد لائی گئیں۔ کل کے حادثہ میں فوج کے دو پائلٹس اور عملہ کا ایک رکن بھی ہلاک ہوگیا تھا ۔ کہا گیا ہے کہ ملیشیائی سفیر برہان محمد کی حالت نازک ہے ۔

TOPPOPULARRECENT