Monday , December 11 2017
Home / Top Stories / فوج نے لشکر طیبہ کے خطرناک دہشت گرد ابو دوجنا کا جنوبی کشمیر میں محاصرہ کرلیا

فوج نے لشکر طیبہ کے خطرناک دہشت گرد ابو دوجنا کا جنوبی کشمیر میں محاصرہ کرلیا

ایک عسکریت پسند ہلاک

سری نگر۔8 ڈسمبر (سیاست ڈاٹ کام) جنوبی کشمیر کے ضلع اننت ناگ میں سکیوریٹی فورسس اور دہشت گردوں کے درمیان گھمسان کی لڑائی چل رہی ہے۔ اس لڑائی میں ایک عسکریت پسند ہلاک ہوگیا۔ دونوں جانب شدت سے فائرنگ کا تبادلہ عمل میں آرہا ہے۔ غیر مصدقہ اطلاعات میں بتایا گیا ہے کہ لشکرطیبہ کے کمانڈر ابو دوجنا کا محاصرہ کرلیا گیا ہے۔ فوج نے ان پر شکنجہ کسنے کے لئے تمام انتظامات کرلے ہیں۔ ضلع اننت ناگ کے موضع اروانی میں ایک مکان کے اندر تین تا چار دہشت گردوں نے پناہ لی ہے۔ مخبر کی اطلاع ملنے پر فوج نے اس علاقے کا محاصرہ کرلیا اور راشٹریہ رائفلس کے ساتھ جموں و کشمیر پولیس اور سی آر پی ایف کے جوانوں کی ٹیم تشکیل دے کر اس موضع میں تعینات کردیا گیا تھا۔ یہاں پر فوج اور دہشت گردوں کے درمیان فائرنگ کے تبادلے کی آوازیں سنی گئیں۔ فوج دھیرے دھیرے آگے بڑھتے ہوئے دہشت گردوں کا عرصہ حیات تنگ کرنے کی کوشش شروع کی ہے لیکن کل رات میں اچانک بندوقوں کی آوازیں خاموش ہوگئیں۔ آج صبح جیسے ہی سوج کی پہلی کرن نمودار ہوئی دہشت گردوں نے سکیوریٹی فورسس پر فائرنگ کرنا شروع کیا۔ تاہم عہدیداروں نے اس گروپ میں لشکر طیبہ کے خطرناک دہشت گرد ابودوجنا کی موجودگی کی توثیق سے انکار کردیا۔ لیکن بعض اطلاعات میں بتایا گیا کہ ابودوجنا ہی اس گروپ میں شامل ہے اور اس کے ساتھ لشکر طیبہ کا ایک اور رکن عبدالمجید گنیہ بھی موجود ہے۔ اس اخبار نے مزید لکھا ہے کہ مقامی افراد نے محاصرہ بندی کے دوران سکیوریٹی فورسس پر سنگ باری بھی کی۔ اگر فوج نے دوجنا کو دبوچ لیا تو اس سال دہشت گردی کے خلاف فوج کی دوسری سب سے بڑی کامیابی ہوگی۔

TOPPOPULARRECENT