Monday , December 18 2017
Home / اضلاع کی خبریں / قانونی پیچیدگیاں کچھ نہیں ، کاش آپ انصاف کریں

قانونی پیچیدگیاں کچھ نہیں ، کاش آپ انصاف کریں

12فیصد تحفظات کا مسئلہ

جگتیال میں مسلمانوں کا شعور بیداری جلسہ، مسرس وسیم احمد، ریاض الدین ماما اور دیگر کا خطاب

جگتیال۔/4مئی، ( سیاست ڈسٹرکٹ نیوز) ہمیں ہماری قربانیوں کا حق دیا جائے بھیک کی ضرورت نہیں ، تحفظات مسلمانوں کا قانونی حق ہے، 12فیصد تحفظات کو تلنگانہ ریاست کی طرح جدوجہد کے ذریعہ حاصل کریں گے۔ ان خیالات کا اظہار محمد کریم احمد ضلعی صدرMSRAC میناریٹی سب پلان 12فیصد ریزرویشن ایکشن کمیٹی نے گزشتہ رات روبی فنکشن ہال جگتیال میں MSRAC اور پاپلر فرنٹ آف انڈیا شاخ جگتیال کے اشتراک سے میناریٹی سب پلان اور 12فیصد تحفظات پر شعور بیداری جلسہ کو مخاطب کرتے ہوئے کیا۔ انہوں نے کہا کہ چیف منسٹر کے سی آر نے انتخابات سے قبل مسلمانوں کو12 فیصد تحفظات کی فراہمی کا نہ صرف زبانی اعلان کیا بلکہ انتخابی منشور میں وعدہ کیا جو آج تک وفا نہ ہوسکا، جس کے لئے MSRAC نے ایک کمیٹی کا قیام عمل میں لاتے ہوئے حکومت پر دباو ڈالتے ہوئے شعور بیداری پروگرام کا انعقاد عمل میں لایا جارہاہے۔ قانونی پیچیدگیاں کچھ بھی نہیں ہیں دیگر ریاستوں میں تحفظات کا تناسب 50فیصد سے بڑھ کر 60 فیصد سے زیادہ ہوچکا ہے جبکہ تلنگانہ ریاست کا تناسب 50فیصد ہی ہے۔ دستور کے آرٹیکل نمبر 15-5کے تحت تعلیمی اور سماجی پچھڑے طبقات کو تحفظات فراہم کرنے اور آرٹیکل نمبر 16-4 میں معاشی پسماندگی کا شکار طبقات کو روزگار کیلئے تحفظات فراہم کرنے دستور واضح ظاہر کرتا ہے پھر حکومت کیوں مسلمانوں کے ساتھ ناانصافی کررہی ہے جبکہ ملک کی آزادی کیلئے مسلمانوں نے قربانیاں دی ہیں، ہمیں ہماری قربانیوں کا حق دیا جائے۔ انہوں نے مسلمانوں سے اپنے حق کے حصول کیلئے اتحاد کا مظاہرہ کرنے اور حکومت پر دباؤ ڈالنے کی خواہش کی۔ MSRAC کی جانب سے 29مئی کواس سلسلہ میں بڑے پیمانے پر ضلع کریم نگر میں ایک جلسہ کا انعقاد عمل میں لایا جارہا ہے

 

اس میں شرکت اور کامیاب بنانے کی خواہش کی ۔ اس موقع پر صدر ملت اسلامیہ ریاض الدین ماما نے مخاطب کرتے ہوئے کے سی آر پر تنقید کرتے ہوئے کہا کہ صرف زبانی وعدے، عملی اقدامات کچھ بھی نہیں ہیں۔ امیر مقامی  جماعت اسلامی شعیب الحق طالب نے مسلمانوں کو تعلیم میں آگے آنے پر زور دیا۔اس موقع پر محمد محمود علی افسر صدر اردو اکیڈیمی ایمپلائز اسوسی ایشن نے مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ 12فیصد تحفظات مسلمانوں کا جائز حق ہے کوشش اور جدوجہد جاری رکھنے کی خواہش کی۔ دلت طبقہ کے بالے شنکر اور سی پی ایم کے راجو اور کانگریس پارٹی ڈسٹرکٹ جنرل سکریٹری میر کاظم علی نے مخاطب کرتے ہوئے تحفظات کو حاصل کرنے کیلئے جدوجہد جاری رکھنے اور MSRAC کی جانب سے جگتیال میں جلسہ کے انعقاد کی ستائش کی اس کو آگے بڑھانے بھرپور تعاون پیش کرنے کا تیقن دیا۔ کے سی آر پراپنے وعدہ کو فراموش کرنے کا الزام لگایا اور کہا کہ12فیصد تحفظات کی فراہمی کیلئے کمیشن کے سروے کا بیان غیر درست ہے، جبکہ سچر کمیٹی رنگاناتھ مشرا کمیٹی کی رپورٹس میں مسلمانوں کی حالت کا تفصیلی تذکرہ آچکا ہے۔ تحفظات کیلئے بی سی کمیشن کی سفارشات اور اسمبلی میں فوری قرارداد کی منظوری پر زور دیا۔ اس موقع پر پاپلر فرنٹ صدر محمد ساجد سجو، کونسلر عبدالباری، تلگودیشم میناریٹی پریسیڈنٹمحمد کبیر کے علاوہ دیگر نے شرکت کی۔ جلسہ کی کارروائی محمد جمیل چاند نے چلائی۔اس موقع پر MSRACکمیٹی کا قیام عمل میں لایا گیاجس میں متفقہ طور پر صدر اور دیگر کا انتخاب عمل میں آیا۔

TOPPOPULARRECENT