Saturday , January 20 2018
Home / جرائم و حادثات / قتل کیس کے ملزمین کے قبضے سے مہلک ہتھیار برآمد

قتل کیس کے ملزمین کے قبضے سے مہلک ہتھیار برآمد

نامپلی میٹرو پولیٹن کریمنل کورٹ کے قریب سنسنی ، ڈی سی سنٹرل زون کا بیان

نامپلی میٹرو پولیٹن کریمنل کورٹ کے قریب سنسنی ، ڈی سی سنٹرل زون کا بیان

حیدرآباد ۔ /21 مارچ (سیاست نیوز) نامپلی میٹروپولیٹین کریمنل کورٹ کے قریب آج اس وقت سنسنی پھیل گئی جب قتل کیس کے دو ملزمین کے قبضے سے مہلک ہتھیار اور بیس بال اسٹیکس برآمد کئے گئے ۔ ڈپٹی کمشنر پولیس سنٹرل زون مسٹر وی بی کملاسن ریڈی نے اس سلسلے میں تفصیلات کا انکشاف کرتے ہوئے بتایا کہ رین بازار پولیس اسٹیشن کا سابق روڈی شیٹر فیاض قتل کیس کے ملزمین محمد امجد اور محمد محیط علی ساکن یاقوت پورہ اپنے حریف گروپ سے مخاصمت ختم کرنے کی غرض سے نامپلی کریمنل کورٹ کے قریب پہونچے ۔ مسٹر ریڈی نے مزید بتایا کہ امجد کا ایک ساتھی سید اجمیری جو سابق میں جھگڑے کی واردات میں ملوث ہے نے امجد اور مقتول روڈی شیٹر فیاض کے حامی افروز خان کے درمیان صلح کرانے کیلئے انہیں نامپلی کریمنل کورٹ کے احاطہ میں طلب کیا ۔ امجد اور محیط علی احتیاطی اقدام کے طور پر اپنے ہمراہ دو تیزدھار تلوار اور بیس بال اسٹیکس کو کار میں چھپاکر کورٹ کے قریب پہونچے تھے کہ تلاشی مہم میں مصروف نامپلی پولیس کے سب انسپکٹر محمد محمود نے انہیں گرفتار کرلیا ۔

گرفتار مجرمین کے قبضے سے ہتھیاروں کے علاوہ ایک انووا گاڑی بھی برآمد کرلی گئی ہے ۔ قتل کیس کے ملزمین کی ہتھیاروں کے ساتھ نامپلی کورٹ کے قریب گرفتاری کی اطلاع آگ کی طرح پھیل گئی اور نامپلی کورٹ میں پہلے سے ہی موجود بی جے پی کارپوریٹر راجہ سنگھ نے یہ دعویٰ کیا کہ مذکورہ ملزمین اسے ختم کرنے کیلئے نامپلی کورٹ پہونچے ۔ راجہ سنگھ نے اس گرفتاری کا فائدہ اٹھانے کی کوشش کرتے ہوئے اپنے ٹوئٹر اکاؤنٹ میں اس سلسلے میں تفصیلات شائع کئے ۔ کارپوریٹر کی اس حرکت کے بعد پولیس چوکس ہوگئی اور ڈپٹی کمشنر آف پولیس سنٹرل زون مسٹر کملاسن ریڈی نے کارپوریٹر کو اپنی حرکتوں سے باز آنے اور غلط اطلاعات پھیلانے پر انتباہ دیا ۔ مسٹر ریڈی نے یہ واضح طور پر کہا ہے کہ کریمنل کورٹ کے قریب گرفتار کئے گئے تینوں نوجوانوں کا کسی بھی بی جے پی لیڈر کے قتل کے منصوبے سے تعلق نہیں ہے ۔
۔

TOPPOPULARRECENT