Sunday , November 19 2017
Home / شہر کی خبریں / قرآن مجید کو پڑھنے ، سمجھنے اور اس پر عمل کرنے کی تلقین

قرآن مجید کو پڑھنے ، سمجھنے اور اس پر عمل کرنے کی تلقین

دفتر سیاست میں قرآنی آیات کوپنوں کی قرعہ اندازی ، مولانا سید زبیر ہاشمی و دیگر کا خطاب
حیدرآباد ۔ 25 اگسٹ ۔ ( سیاست نیوز) برادران اسلام میں دینی جذبہ پیدا کرنے اور انہیں دینی علم میں پختگی پیدا کرنے کے خیال سے ادارہ سیاست اور ریاض سعودی عرب میں مقیم حیدرآبادی کرم فرماؤں کے مشترکہ زیر اہتمام ہر سال کی طرح امسال بھی رمضان المبارک میں قرآنی آیات پر مبنی سوالات کے کوپنوں کا اعلان کیا گیا تھا جس میں سینکڑوں مسلمانوں نے حصہ لیا اور اپنی دینی معلومات کا والہانہ ثبوت دیا ہے۔ کوپنوں کا کافی باریکی سے جائزہ لینے کے بعد قرعہ اندازی کے ذریعہ انعامات کے اعلان کرنے کا فیصلہ کیا گیا تھا۔ ان کوپنوں کی قرعہ اندازی کی تقریب آج سینکڑوں افراد کی موجودگی میں محبوب حسین جگر ہال واقع احاطہ روزنامہ سیاست عابڈس میں مولانا سید زبیر ہاشمی نائب مفتی جامعہ نظامیہ و مرتب مذہبی صفحہ روزنامہ سیاست کے ہاتھوں عمل میں آئی۔ اس موقع پر جنرل منیجر روزنامہ سیاست جناب میر شجاعت علی ، ڈاکٹر حافظ صابر پاشاہ قادری ، حبیب محمد رفیع کمپیوٹر آپریٹر روزنامہ سیاست کے علاوہ دیگر علماء کرام اور کوپن داروں کی کثیر تعداد موجود تھی۔ اس موقع پر مولانا سید زبیر ہاشمی نے خطاب کرتے ہوئے قرآنی آیات کے حوالہ سے بتایا کہ انعام کے حاصل ہونے پر اللہ کا شکر بجالانا چاہئے کیونکہ اﷲ تعالیٰ شکر کرنے والے بندوں کو نہ صرف پسند کرتا ہے بلکہ اور زیادہ اجر عطا کرتا ہے ۔ انسان کی زندگی کے تین اہم ادوار ہیں بچپن ، جوانی اور بڑھاپا اور اس میں درمیانی عمر کی سب سے بڑی اہمیت ہے اور کوئی جوانی میں گناہوں سے بچتا ہے، خوف خدا کے ساتھ نفس پر کڑی نظر رکھتا ہے تو اس کی نہ صرف دنیاوی زندگی بلکہ اخروی زندگی بھی اچھی ہوجائے گی ۔ انھوں نے قرآن کو پڑھنے ، سمجھنے اور اس پر عمل کرنے کی تلقین کرتے ہوئے کہا کہ جس طرح ماہ رمضان میں قرآن مجید کو پڑھ کر سمجھتے ہوئے قارئین نے دینی مقابلہ میں حصہ لیا ، اسی طرح ان پر عمل بعد رمضان بھی کرتے ہوئے رب تبارک و تعالیٰ کی خوشنودی حاصل کریں۔مولانا زبیر ہاشمی نے ماہ رمضان المبارک کے دوران قرآنی سوالات کے کوپن مقابلہ میں حصہ لینے والے سیاست کے قارئین کے جذبہ کی ستائش کی اور مبارکباد پیش کیا۔ مولانا نے کہا کہ اس مقابلہ سے کوپن دار کو انعام ملے نہ ملے لیکن اللہ کے پاس ان کو اجر یقینی ہے۔ جناب حبیب محمد بن عبداللہ رفیع نے انسان کی زندگی اور موت کے فرق کے حوالہ سے آغاز کرتے ہوئے کہا کہ زندگی کیا ہے اور موت کیا ہے اس فرق کو سمجھ کر اگر مسلمان زندگی گذاریں تو کامیاب ہوں گے ۔ انھوں نے قرآنی آیات کے حوالے سے مثالیں دیتے ہوئے زندگی بسر کرنے اور ہر شعبہ میں ان پر عمل پیرا ہونے کی تلقین کی ۔ سعودی عربیہ (ریاض) میں مقیم حیدرآبادیوں اور ادارہ سیاست کے اشتراک سے گزشتہ کئی برسوں سے یہ سلسلہ جاری ہے ۔ جناب میر شجاعت علی منیجر سیاست نے نگرانی کرتے ہوئے بتلایا کہ سعودی عربیہ میں مقیم حیدرآبادی احباب کی رقم میں مزید 50 ہزار روپئے ادارہ سیاست کی جانب سے شامل کرتے ہوئے ایک لاکھ روپئے نقد انعامات دیئے جاتے ہیں۔ اس موقع پر قرعہ اندازی کے ذریعہ انعام اول دس ہزار روپئے اشرف النساء کاچیگوڑہ ، انعام دوم پانچ ہزار روپئے سید محمد علی مغل پورہ ، انعام سود تین ہزار روپئے کوثر بانو کریم نگر اور چوتھا انعام دو ہزار روپئے حفیظ خان آغا پورہ کو حاصل ہوا جبکہ 80 ایک ہزار روپئے کے ترغیبی انعامات کی بھی قرعہ اندازی عمل میں آئی ۔پہلے چار انعامات حاصل کرنے والوں کو ذریعہ خط مطلع کرتے ہوئے دفتر سیاست میں انعامات دیئے جائیں گے جبکہ 80 ترغیبی انعامات پانے والوں کو ان کے رہائشی پتہ پر ذریعہ منی آرڈر ( پوسٹ ) انعامی رقم بھیجی جائیگی۔ قبل ازیں حافظ صابر پاشاہ کی قرات کلام پاک سے تقریب کا آغاز ہوا۔ جناب میر رضا علی شاہ قادری نے نعت شریف پیش کرنے کی سعادت حاصل کی جب کہ نظامت کے فرائض ایم اے حمید نے بحسن و خوبی انجام دئیے اور آخر میں شکریہ ادا کیا۔

TOPPOPULARRECENT