Saturday , December 16 2017

قران

سب تعریفیں اﷲ کے لیے جو مالک ہے ہر اس چیز کاجو آسمانوں میں ہے اور ہر اس چیز کا جو زمین میں ہے اور اسی کے لیے ساری تعریفیں ہیں آخرت میں اور وہی بڑا دانا ، ہر بات سے باخبر ہے ۔ (سورہ سبا ۔ آیت ۱)
یعنی کائنات کی بلندیوں اور پستیوں میں ہر چھوٹی اور بڑی چیز کا خالق بھی اﷲ تعالیٰ ہے ۔ مالک بھی وہی ہے اور ہرچیز اسی کے فرمان کے سامنے سرافگندہ ہے جو زیبائی ، جو خوبی کہیں نظر آرہی ہے ۔ اُسی کا لُطف و کرم کا پرتو ہے جو جمال و کمال کسی میں پایا جاتا ہے اُسی کے حسن ازل کی جولہ نمائی ہے ۔ اس لئے ہر قسم کی حمد و ثنا کا وہی مستحق ہے ۔ اس سے یہ بتایا کہ صرف اس جہان کی ہرچیز اس کی نہیں بلکہ عالم آخرت کی ہر شے کا خالق و مالک بھی وہی ہے ۔ وہاں بھی اسی کی حکمرانی ہوگی ۔ جو نعمت کسی کو ملے گی اُسی کی جود و عطا کا کرشمہ ہوگا ۔ اس لیے وہاں بھی ہرقسم کی حمد و توصیف کا سزاوار صرف اﷲ تعالیٰ ہے ۔ ’’لہٗ‘‘ خبر کو یہاں مقدم ذکر کرکے اس امر کی طرف اشارہ کردیا کہ اس دُنیا میں تو کئی غلط اندیش اس کو چھوڑکر غیروں کی حمد کرتے رہتے ہیں ، لیکن قیامت کے دن سارے حجاب اُٹھ جائیں گے ۔ حقیقت اپنی تمام رعنائیوں کے ساتھ عیاں ہوجائے گی ۔ وہاں حمد ہوگی ، تو صرف اس مالک یوم الدین کی ۔ اﷲ تعالیٰ کا ہر ارشاد ، ہر کام اور اور اس کی شریعت کا ہر قانون بلکہ قضا و قدر کے سارے فیصلے اس کی حکمت و دانائی کے آئینہ دار ہیں۔ وہ اپنی مخلوق کے حالات اور ضروریات سے پوری طرح باخبر ہے ۔

TOPPOPULARRECENT