Monday , December 11 2017
Home / شہر کی خبریں / قطب شاہی و آصف جاہی دور میں موسیقاروں کو خصوصی پلیٹ فارم

قطب شاہی و آصف جاہی دور میں موسیقاروں کو خصوصی پلیٹ فارم

ٹی آر سی کا مذاکرہ، چیرمین ایم ویدا کمار کا خطاب
حیدرآباد۔9اگست(سیاست نیوز) قطب شاہی اور آصف جاہی دور حکومت میں ریاست حیدرآباد کو موسیقی کے فروغ کے لئے نمایاں درجہ حاصل تھا ۔ مشاعرے‘ غزل گوئی‘ صوفی میوزک کو عام کرتے ہوئے قطب شاہی اور آصف جاہی حکمرانوں نے ریاست حیدرآباد میں دنیا بھر کے موسیقاروں کو ایک پلیٹ فارم فراہم کیا ہے او ریہی وجہہ ہے کہ موسیقی ریاست حیدرآباد کی قدیم تہذیب کاحصہ بنی ہوئی ہے۔ چیرمن تلنگانہ ریسور س سنٹر مسٹر ایم ویدا کمار نے ٹی آر سی کے 186ویں مذاکرے ’’ہوائین گتیار کے موجد جئے ونت نائیڈو سے ایک ملاقات‘‘ کے دوران یہ بات کہی۔ مسٹر ویدا کمار نے ریاست حیدرآباد کو ثقافتی تہذیب کا مرکز قراردیتے ہوئے کہاکہ قطب شاہی اور آصف جاہی حکمرانوں نے دنیا بھر کے ممتاز موسیقاروں کو نہ صرف ریاست حیدرآباد مدعو کیا بلکہ یہاں پر ان کی مستقبل سکونت کا اہتمام کرتے ہوئے موسیقی کو ریاست حیدرآباد کی تہذیب کا حصہ بنایا۔مسٹر ویدا کمار نے ہوائین گتیار ایجاد کرنے والے جئے ونت نائیڈو کے کارنامے کی بھی ستائش کرتے ہوئے کہاکہ اگر ایسے فن کار قطب شاہی یا پھر آصف جاہی حکمرانوں کے دورمیںہوتے تو انہیں ہر قسم کی سہولت او رمرعات سے نوازا جاتا مگر افسوس کہ ہوائین گیتار ایجاد کرنے والا منفرد فن کار جمہوری دور میںحکمرانوں کی عصبیت کا شکار ہے۔مسٹر ویداکمار نے تلنگانہ ریسور س سنٹر کی جانب سے جئے ونت نائیڈو جیسے فن کاروں کی حوصلہ افزائی کے لئے ہر ممکن تعاون کا اظہار کیا۔اس موقع پر جئے ونت نائیڈو نے ہوائین گیتار پر دھن پیش کرتے ہوئے سماں باندھ دیا۔

TOPPOPULARRECENT