Sunday , October 21 2018
Home / عرب دنیا / قطر پر تحدیدات کا ایک سال مکمل ، قوت ارادی میں کوئی کمی نہیں

قطر پر تحدیدات کا ایک سال مکمل ، قوت ارادی میں کوئی کمی نہیں

روس ایرڈیفنس میزائل سسٹم خریدنے کا فیصلہ اٹل ، وزیر خارجہ الثانی کا بیان
دوحہ (قطر)۔ 6 جون (سیاست ڈاٹ کام) تلخ ڈپلومیسی خلیج کے ایک سال کی تکمیل پر وزیر خارجہ قطر محمد بن عبدالرحمن الثانی نے منگل کو کہا کہ تحدیدات کے باوجود قطر کی طاقت و قوت میں کوئی کمی نہیں آئی۔ مزید برآں بجائے اس کے قطر کی قوت ارادی مزید مضبوط ہوئی۔ وزیر خارجہ محمد بن عبدالرحمن الثانی نے کہا کہ وہ اپنے حریفوں سے بات چیت کیلئے ہمیشہ تیار ہیں۔ الثانی نے قطر کے حریفوں پر تنقید کرتے ہوئے کہا کہ اپنے خیالی کامیابیوں کے جال سے باہر نکلیں۔ واضح رہے کہ پیر 5 جون 2017ء کو سعودی اتحاد بشمول متحدہ عرب امارات، بحرین اور مصر نے اچانک قطر سے یہ الزام لگاتے ہوئے کہ وہ دہشت گرد تنظیموں اور ایران کی مدد کررہا ہے۔ تمام تر تعلقات منقطع کرلئے تھے۔ مزید برآں سعودی عرب سے متصل واحد زمینی سرحد کو بھی بند کردیا گیا اور سعودی ہوائی پٹی اور دونوں ملکوں کے شہریوں کو بہ آسانی سفر کو سہولت سے بھی محروم کردیا گیا تھا، تاہم قطر کو اُمید تھی کہ وہ سعودی عرب کو منالے گا اور اس کی غلط فہمی کو دور کرلے گا۔ کافی کوششوں کے باوجود قطر کو اس میں ناکامی ہاتھ لگی۔ قطر نے کہا تھا کہ اس کی آزادانہ خارجہ پالیسی پر سعودی عرب نے حملہ کیا۔ علاوہ ازیں یہ قطر کے اقتدار اعلیٰ پر حملہ کے برابر ہیں جس کو قطر قطعی برداشت نہیں کرے گا۔ کویت اور امریکہ کی کئی سفارتی کاوشیں ناکام ثابت ہوئیں۔ الجزیرہ ٹی وی جو قطر کا اپنا ٹی وی چیانل ہے، پر منگل کو کہا گیا کہ قطر، روس کے S-400 ایرڈیفنس میزائل سسٹم حتمی طور پر خریدے گا جس پر سعودی عرب نے فرانسیسی صدر ایمانیول میکرون کو کہا تھا کہ وہ قطر کو اس معاملت سے باز رکھنے میں اپنا کردار ادا کرے جس کی وجہ سے قطر پر فوجی کارروائی کے امکان کو ٹالا جاسکتا ہے۔

TOPPOPULARRECENT