Friday , June 22 2018
Home / شہر کی خبریں / قلت آب کے اہم مسئلہ پر قابو پانا وقت کا تقاضہ

قلت آب کے اہم مسئلہ پر قابو پانا وقت کا تقاضہ

پانی کی بچت سے متعلق عوام میں شعور بیداری مہم پر زور ، پینٹنگ مقابلہ

پانی کی بچت سے متعلق عوام میں شعور بیداری مہم پر زور ، پینٹنگ مقابلہ
حیدرآباد ۔ 25 ۔ نومبر : ( سیاست نیوز ) : بڑھتی ہوئی آبادی کے تناسب کے لحاظ سے روز افزوں پانی کی ناکافی مقدار سے قلت آب کا مسئلہ سنگین صورتحال اختیار کرتا جارہا ہے اور قلت آب جیسے اہم مسئلہ پر قابو پانا وقت کی اہم ترین ضرورت ہے جب کہ پانی انسانی کی زندگی کا اہم عنصر ہے اور پانی کی بچت سے متعلق عوام میں شعور اجاگر کرنے کی اشد ضرورت ہے اور عوام پر بھی یہ ذمہ داری عائد ہوتی ہے کہ وہ پانی کے ایک ایک خطرہ کی بچت کرتے ہوئے بیجا پانی کے استعمال سے گریز کریں تاکہ آئندہ پانی کی شدید قلت سے محفوظ رہ سکیں ۔ ان خیالات کا اظہار آج پرنسپل سکریٹری اسکولس ایجوکیشن گورنمنٹ آف آندھرا پردیش مسٹر آدھار سنہا آئی اے ایس نے رویندرا بھارتی میں منسٹری آف واٹر ریسورس ، ریور ڈیولپمنٹ اینڈ گنگا ریجنویشن سنٹرل گراونڈ واٹر بورڈ سدرن ریجن حیدرآباد کے زیر اہتمام “Save a Drop Save the Future” کے عنوان سے منعقدہ ’ 5 ویں ریاستی سطح کے پینٹنگ مقابلہ 2014 آندھرا پردیش ‘ کے منتخبہ طلباء میں تقسیم انعامات تقریب کے اجلاس کو بحیثیت مہمان خصوصی مخاطب کرتے ہوئے کیا ۔ انہوں نے بتایا کہ اسکولی طلباء میں پانی کی بچت سے متعلق پینٹنگس مقابلہ کا انعقاد ایک خوش آئند بات ہے ۔ انہوں نے بتایا کہ اس مقابلہ سے نہ صرف طلباء میں شعور بیدار ہوا ہے بلکہ اولیائے طلبہ کے علاوہ عوام میں بھی شعور بیدار ہوگا ۔ انہوں نے بتایا کہ مذکورہ پینٹنگ مقابلہ 2014 میں ریاست آندھرا پردیش کے زائد از 12 ہزار مدارس سے تعلق رکھنے والے زائد از دیڑھ لاکھ طلباء نے حصہ لیتے ہوئے پانی کی بچت سے متعلق پینٹنگ میں اپنی بہترین صلاحیتوں کا مظاہرہ کرتے ہوئے طلباء نے حوصلہ افزاء انعامات حاصل کیے ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ طلباء قوم کا سرمایہ ہوتے ہیں جو آج کے چھوٹے اور کل کے بڑے اور مستقبل میں وہ کس عہدے پر فائز ہو کر سماجی خدمات انجام دیں گے کسی کو پتہ نہیں ۔ انہوں نے کہا کہ آج تعلیمی اداروں میں بچے تعلیم کے ساتھ ساتھ پینٹنگ کے علاوہ دیگر فنی صلاحیتوں کو اجاگر کرنے میں ایک دوسرے پر سبقت لے جارہے ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ طلباء کے لیے اس قسم کے پینٹنگ مقابلے نہ صرف ریاستی سطح پر بلکہ ضلعی سطح پر بھی منعقد کرنے کی ضرورت ہے تاکہ ضلعی اور دیہی سطح کے طلباء میں بھی پینٹنگ سے متعلق شعور بیدار ہوسکے اور پانی کی بچت سے متعلق عوام میں شعور بیدار کرنے میں مزید سہولت ہوسکے ۔ اس موقع پر ڈائرکٹر گراونڈ واٹر ڈپارٹمنٹ گورنمنٹ آف آندھرا پردیش ڈاکٹر کے وینوگوپال نے بحیثیت اعزازی مہمان مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ پانی کے بغیر انسان کی زندگی ادھوری ہے اور پانی ہمیں مختلف ذرائع جیسے بارش ، ندیوں ، تالابوں ، بورویلس کے ذریعہ مہیا ہوتا ہے جو اس وقت آبادی کے لحاظ سے ناکافی ہورہا ہے ۔ جس کی بچت کے لیے پانی کے بیجا استعمال سے احتیاط برتنے کی انتہائی ضرورت ہے ۔ انہوں نے بتایا کہ سابق میں 17 سو کیوبک میٹر پانی عوام کے استعمال کے لیے کافی ہوجاتا تھا لیکن آج ہزاروں کیوبک میٹر پانی کی سربراہی پر بھی پانی کی قلت محسوس کی جارہی ہے اور پانی کی بچت سے متعلق عوام بالخصوص خواتین اور بچوں میں بھی شعور بیدار کرنے کی ضرورت ہے ۔ انہوں نے کہا کہ عنقریب پانی کی شدید قلت ہونے کے امکانات روشن نظر آرہے ہیں ۔ اس موقع پر اسسٹنٹ پروفیسر آرٹس کالج مسٹر وینکٹیشورلو ، ڈپٹی ڈائرکٹر اسکول ایجوکیشن آندھرا پردیش شریمتی اوشا رانی ، جی ڈی شریمتی روہنی نے بھی مخاطب کرتے ہوئے پانی کی بچت پر اسکولی طلباء کے پینٹنگ مقابلے میں طلباء کی صلاحیتوں کی ستائش کی ۔ جلسہ کی کارروائی سائنسداں سنٹرل گراونڈ واٹر بورڈ حیدرآباد مسٹر ٹی بھرت بھوشن نے چلائی ۔ بعد ازاں پینٹنگ مقابلہ کے فاتح طلباء میں پرنسپل سکریٹری اسکول ایجوکیشن گورنمنٹ آف آندھرا پردیش مسٹر آدھار سنہا کے ہاتھوں انعامات کی تقسیم عمل میں آئی ۔۔

TOPPOPULARRECENT