Wednesday , May 23 2018
Home / شہر کی خبریں / قومی سطح پر شناخت بنانے کے سی آر کی تشہیری مہم

قومی سطح پر شناخت بنانے کے سی آر کی تشہیری مہم

میڈیا میں اشتہارات، تیسرے محاذ کی تیاری کیلئے قومی قائد کے طور پر اُبھرنے کی کوشش

حیدرآباد۔/12 مئی، ( سیاست نیوز) تلنگانہ سے قومی سیاست میں قدم رکھنے کی تیاری کرنے والے چیف منسٹر کے چندر شیکھر راؤ نے قومی میڈیا اور خاص طور پر نیوز چینلس میں بڑے پیمانے پر تشہیری مہم شروع کردی ہے۔ حکومت کے محکمہ اطلاعات و تعلقات عامہ کے ذریعہ قومی سطح پر تشہیری مہم کیلئے ٹنڈرس طلب کئے گئے اور قومی سطح کے مختلف زبانوں کے اخبارات اور نیوز چینلس میں حکومت کی نئی رعیتو بندھو اسکیم کے اشتہارات دیئے گئے۔ اس طرح پہلی مرتبہ چیف منسٹر کے سی آر نے قومی سطح پر اپنی شناخت بنانے کیلئے میڈیا کا سہارا لیا ہے جس پر اضافی خرچ آئے گا جو کئی کروڑ بھی ہوسکتا ہے۔ قومی سطح پر تیسرے محاذ کے قیام کی تیاریوں میں مصروف کے سی آر چاہتے ہیں کہ ملک کی تمام ریاستوں میں ان کی پہچان اور شناخت بنے۔ تلنگانہ میں کسانوں کی بھلائی سے متعلق دیگر ریاستوں سے بہتر اسکیمات کے ذریعہ وہ عوام کے دلوں میں جگہ بنانے چاہتے ہیں۔ قومی سطح پر تشہیری مہم کے فیصلہ سے کے سی آر کے مستقبل کے عزائم کا پتہ چلتا ہے کہ وہ کس طرح منصوبہ بند انداز میں خود کو قومی سطح پر متعارف کرنا چاہتے ہیں۔ قومی نیوز چینلس میں رعیتو بندھو اسکیم کے اشتہارات کا آغاز کیا گیا جس میں کسانوں کو فی ایکر 8 ہزار روپئے ادائیگی کو نمایاں کیا گیا ۔ اشتہارات کے ذریعہ چیف منسٹر کو ملک میں کسانوں کے واحد ہمدرد کے طور پر پیش کرنے کی کوشش کی گئی ہے۔ بتایا جاتا ہے کہ آنے والے دنوں میں دیگر اسکیمات سے متعلق اشتہارات بھی قومی میڈیا میں جاری کئے جائیں گے۔ اس طرح کے سی آر قومی سطح پر اپنا مقام بنانا چاہتے ہیں۔ بعض علاقائی جماعتوں کے قائدین سے ملاقات کے باوجود چیف منسٹر ابھی تک قومی قائد کی حیثیت سے نہیں اُبھر سکے۔ انہوں نے جنتا دل ( ایس ) ، سماجوادی پارٹی ، ترنمول کانگریس اور ڈی ایم کے قائدین سے ملاقاتیں کی ہیں۔ بتایا جاتا ہے کہ چیف منسٹر کرناٹک کے نتائج کے بعد اپنی مہم کو آگے بڑھائیں گے۔ قومی سطح پر چیف منسٹر کی تشہیر کیلئے جو ٹنڈرس طلب کئے گئے ہیں ان میں 12 اداروں نے حصہ لیا اور حکومت نے7 اداروں کو شارٹ لسٹ کیا ہے۔ چیف منسٹر کے دفتر کی جانب سے اشتہارات کی ڈیزائننگ کی جائے گی جس کیلئے بعض ماہرین کی خدمات حاصل کی گئی ہیں۔ قومی میڈیا میں انگریزی اور ہندی زبان میں اشتہارات جاری کئے گئے جبکہ پڑوسی ریاستوں میں وہاں کی مقامی زبان میں اشتہارات دینے کا فیصلہ کیا گیا۔ ممبئی، دہلی، بنگلور، چینائی اور کولکتہ کے میڈیا پر خصوصی توجہ دی گئی ہے۔ مشن بھگیرتا، کسانوں کو 24 گھنٹے برقی کی سربراہی اور صنعتوں کے قیام کے سلسلہ میں ریاست کو پہلا مقام سے متعلق سابق میں قومی سطح پر تشہیر کی گئی تھی۔ بتایا جاتا ہے کہ اپوزیشن کے الزامات کا مقابلہ کرنے کیلئے کے سی آر تشہیری مہم کا سہارا لیں گے۔

TOPPOPULARRECENT