Friday , January 19 2018
Home / اضلاع کی خبریں / قیام تلنگانہ کے بعد ترقیاتی کاموں میں سرعت یقینی

قیام تلنگانہ کے بعد ترقیاتی کاموں میں سرعت یقینی

ٹی آر ایس امیدواروں کو کامیاب بنانے کی اپیل ، پدمادیویندر ریڈی کا بیان

ٹی آر ایس امیدواروں کو کامیاب بنانے کی اپیل ، پدمادیویندر ریڈی کا بیان

میدک /20 مارچ ( سیاست ڈسٹرکٹ نیوز) تلنگانہ راشٹریہ سمیتی حلقہ اسمبلی میدک کی انچارج و سابق رکن اسمبلی محترمہ ایم پدما دیویندر ریڈی نے کہا کہ علحدہ ریاست تلنگانہ کے قیام کے بعد ریاست تلنگانہ میں شامل تمام بلدیات میں ترقیاتی کاموں کی انجام دہی میں تیزی پیدا ہوگی ۔ انہوں نے اس یقین کا اظہار کیا کہ نئی ریاست تلنگانہ کے وزیر اعلی جناب کے چندرا شیکھر راؤ ہوں گے ۔ محترمہ پدما دیویندر ریڈی شہر میدک کے بلدی حلقوں وارڈ نمبر 7 ، وارڈ نمبر 9 اور وارڈ نمبر 20، 22 میں اپنی پارٹی کے امیدواروں کے انتخابی دفتروں کے افتتاح کیا اور مذکورہ بلدی حلقوں میں ڈور ٹو ڈور انتخابی مہم چلانے کے موقع پر ان خیالات کا اظہار کیا ۔ انہوں نے کہا کہ میدک بلدیہ پر گلابی جھنڈا لہرانا یقینی ہے ۔ انہوں نے بلدی حلقہ 7 میں اپنے امیدوار محترمہ آمینہ حمید ، وارڈ نمبر 9 میں سریدھر راؤ وارڈ نمبر 20 میں اپنے امیدوار مسٹر اے ملکارجن گوڑ ، وارڈ نمبر 22 میں شریمتی اے گائتری ملکارجن کو بھاری اکثریت کے ساتھ منتخب کرنے کی رائے دہندوں سے گذارش کی اور کہا کہ عنقریب تمام بلدی حلقوں میں تیزی کے ساتھ انتخابی مہم چلائی جائے گی ۔ جس میں ٹی آر ایس ضلع انچارج راجیا یادو ، رام لنگا ریڈی سابق رکن اسمبلی کے علاوہ سکریٹری ریاستی ٹی آر ایس مسٹر ایم دیویندر ریڈی کی شرکت ہوگی ۔ یہاں یہ بتانا بے محل نہ ہوگا کہ بلدی حلقہ 7 کی امیدوار قبل ازیں بلدیہ میں رکن معاون کی حیثیت سے خدمات انجام دے چکی ہیں ۔ جبکہ وارڈ نمبر 9 کے حرکیاتی امیدوار سریدھر راؤ قبل ازیں کانگریس ٹکٹ پر اسی حلقہ سے صرف 7 ووٹوں کے فرق سے انتخاب ہار گئے تھے ۔ اب کی بار مسٹر سریدھر ٹی آر ایس کے امیدوار کی حیثیت سے میدان میں ہیں ۔ وارڈ 20 کے امیدوار سابق نائب صدرنشین پارٹی ہیں ۔ یہ ایک سیکولر حرکیاتی قائد ہیں ۔ 22 وارڈ سے ان کی اہلیہ گائتری قسمت آزمائی کر رہے ہیں ۔
٭٭٭

Top Stories

TOPPOPULARRECENT