Wednesday , December 13 2017
Home / سیاسیات / لالو پرساد اور خاندان کیخلاف رقومات کی منتقلی کیس

لالو پرساد اور خاندان کیخلاف رقومات کی منتقلی کیس

یو پی اے حکومت کے دور میں کی گئی دھاندلیوں پر انفورسمنٹ ڈائرکٹوریٹ کی کارروائی
نئی دہلی 27 جولائی (سیاست ڈاٹ کام) آر جے ڈی سربراہ لالو پرساد یادو کے لئے نئی پریشانیاں پیدا کردی گئی ہیں۔ انفورسمنٹ ڈائرکٹوریٹ نے یو پی اے دور حکومت کے دوران ریلوے ہوٹلوں کو الاٹمنٹ کردہ کاموں میں لالو پرساد یادو اور ان کے ارکان خاندان کے ملوث ہونے کے خلاف رقومات کی منتقلی کا کیس رجسٹر کیا گیا ہے۔ اِس کیس کو رقومات کی منتقلی انسداد قانون کے مختلف دفعات کے تحت درج رجسٹر کیا گیا۔ مرکزی تحقیقاتی ایجنسی نے ایف آئی آر درج کرتے ہوئے اس سلسلے میں قدم اُٹھائے ہیں۔ اِس ماہ کے اوائل میں سی بی آئی نے سابق چیف منسٹر بہار اور دیگر کے خلاف مجرمانہ ایف آئی آر درج کروائے تھے اور مختلف مقامات پر دھاوے کرتے ہوئے تلاشی لی تھی۔ انفورسمنٹ ڈائرکٹوریٹ کی جانب سے ملزمین کی کرتوتوں اور مجرمانہ سرگرمیوں کی تحقیقات کی جائے گی۔ لالو پرساد یادو کی اہلیہ سابق چیف منسٹر بہار رابڑی دیوی اور فرزند تیجسوی یادو کے علاوہ دیگر کو ایجنسی کی تحقیقات کا سامنا ہے۔ انفورسمنٹ کیس انفارمیشن رپورٹ میں الزامات درج کئے گئے ہیں۔ یہ کیس اُس وقت کا ہے جب لالو پرساد یادو یو پی اے حکومت میں وزیر ریلوے تھے۔

TOPPOPULARRECENT