Wednesday , December 12 2018

لاکھوں روپئے کی دھوکہ دہی، عثمانیہ کالج کا لیاب اٹنڈنٹ معطل

چنچل گوڑہ جیل سے ریمانڈ سرٹیفکیٹ کے حصول کے بعد احکام جاری
حیدرآباد۔/20 ڈسمبر، ( سیاست نیوز) دھوکہ دہی کے معاملہ میں ملوث لاکھوں روپئے غبن کرنے والے ایک سرکاری ملازم کو برطرف کردیا گیا ہے۔ بتایا جاتا ہے کہ عثمانیہ میڈیکل کالج میں لیاب اٹنڈنٹ ملازم عباس حسین کو کالج پرنسپل ڈاکٹر ارونا رامیانے معطل کردیا۔ چیک باونس دھوکہ دہی اور لاکھوں روپئے غبن کرنے کے معاملہ میں عباس حسین جیل کی سزا کاٹ چکا ہے۔ پرنسپل نے دبیر پورہ پولیس اور چنچل گوڑہ جیل کے سپرنٹنڈنٹ سے ریمانڈ سرٹیفکیٹ حاصل کرنے کے بعد یہ اقدام کیا۔ عباس حسین کے خلاف شکایت کرنے والے میر ہادی علی جو اس شخص کی دھوکہ دہی کا شکار ہوئے نے عثمانیہ میڈیکل کالج کی پرنسپل سے نمائندگی کی تھی اور انہوں نے بتایا کہ عباس حسین اور اس کی بیوی شہناز فاطمہ نے منصوبہ بند طریقہ سے ان کے لاکھوں روپئے ہڑپ لئے اور انہیں دھوکہ دہی کا شکار بنایا۔ انہوں نے بتایا کہ18 اکٹوبر تا 25 اکٹوبر تک عباس حسین جیل میں موجود تھا۔

TOPPOPULARRECENT