Wednesday , June 20 2018
Home / شہر کی خبریں / لاکھوں رکاوٹوں کے باوجود ٹکٹ کا حصول ، سازشوں کے درمیان کامیابی یقینی

لاکھوں رکاوٹوں کے باوجود ٹکٹ کا حصول ، سازشوں کے درمیان کامیابی یقینی

نامپلی تلگو دیشم امیدوار فیروز خاں کا پیدل دورہ ، عوام سے ملاقات ، والہانہ استقبال

نامپلی تلگو دیشم امیدوار فیروز خاں کا پیدل دورہ ، عوام سے ملاقات ، والہانہ استقبال

حیدرآباد ۔ 17 ۔ اپریل : ( پریس نوٹ ) : تلگو دیشم پارٹی حلقہ اسمبلی نامپلی کے امیدوار جناب فیروز خاں نے 16 اپریل شام 5 بجے سے آصف نگر ڈیویژن میں فیل خانہ ، دتاتریہ کالونی میں گھر گھر جاکر عوام سے ملاقات کی اور مسائل سے آگاہی حاصل کی اس موقع پر بزرگ حضرات و خواتین فیروز خاں کے سر پر ہاتھ رکھ کر کامیابی کے لیے دعائیں کیں ۔ بچوں میں تعلیمی اشیاء اور شدید گرما میں پینے کے پانی سربراہ کئے جانے پر شکریہ ادا کیا ۔ کامیابی حاصل کرنے کے بعد حلقہ نامپلی کو چار چاند لگادینے کے لیے دعائیں بھی کی اور بکثرت گلپوشی بھی کی گئی ۔ اکثر لوگوں کا یہ کہنا تھا کہ لاکھ رکاوٹوں کے باوجود آپ نے ٹکٹ حاصل کیا ہے اور لاکھ سازشوں کے باوجود آپ کو ہی کامیابی حاصل ہوگی ۔ واقع اگر عوام کے مسائل حل کئے جاتے تو اس طرح کے ہتھکنڈوں کی ضرورت ہی نہیں پڑتی ۔ آج وہ حالات نہیں ہیں لوگ لاشعوری میں کچھ بھی سن کر یقین کیا کرتے تھے آج خاص طور پر حلقہ نامپلی کی عوام تعلیم یافتہ اور باشعور ہیں وہ اپنے لیے روزگار ، تعلیم اور حلقہ کے لیے ترقی چاہتے ہیں ۔

کام کے علاوہ باقی باتوں کو فضول سمجھتے ہیں ۔ فیروز خاں نے کہا ہے کہ اگر انہیں نامپلی سے منتخب کیا جاتا ہے تو حلقہ نامپلی پچاس سال آگے ترقی یافتہ ہوجائے گا ۔ کیا ایسے شخص کی ضرورت ہے جس کی کوئی پہچان نہیں یا ایسا شخص منتخب ہوناچاہئے جو کہ فعال و حرکیاتی شخصیت کے علاوہ حلقہ کا بچہ بچہ واقف ہوسکے ۔ انہوں نے مزید کہا کہ جب میں ہندو بستیوں میں جاتا ہوں تو لوگ والہانہ استقبال کرتے ہیں عزت دیتے ہیں کیا اس حلقہ نامپلی کو ہندو و مسلمان کے اتحاد کا گہوارہ بنانا فرقہ پرستی ہے یا دو فرقوں کو جدا کر کے اپنا مفاد حاصل کرنا جرم نہیں ہے ۔ فیروز خاں ہندو و مسلم دونوں میں مقبول لیڈر ہے اور بلا لحاظ مذہب کام کرتے ہیں ۔ مسلمان ووٹرس نے بھی ان لوگوں سے بے وفائی نہیں کی جو کہ اچھے کام کرتے ہیں یا مصیبت کے وقت ساتھ دیتے ہیں انہوں نے مقامی جماعت کے قائد سے پانی کی شدید قلت کو حل کرنے کے لیے کہا تو انہوں نے اللہ سے دعا کرنے کو کہا ۔ حلقہ اسمبلی نامپلی کے عوام سوال پوچھ رہے ہیں کہ یہ کام فیروز خاں نے کیسے کر دکھایا ۔ اس کی کوئی سیاسی طاقت نہیں تھی اس لیے کسی بھی بہکاوے میں آئے بغیر فیروز خاں کے حق میں ہی ووٹ دینگے ۔۔

TOPPOPULARRECENT