Friday , August 17 2018
Home / Top Stories / لبنان کے مقتدر اعلیٰ کا احترام ضروری : امریکہ

لبنان کے مقتدر اعلیٰ کا احترام ضروری : امریکہ

سعد الحریری امریکہ کے بھروسہ مند حلیف ، وائیٹ ہاوز کا بیان
واشنگٹن ۔ 11 ۔ نومبر : ( سیاست ڈاٹ کام ) : امریکہ نے آج تمام ملکوں سے کہا ہے کہ وہ لبنان کے مقتدر اعلیٰ کا احترام کریں ۔ اس ملک کی آزادی اور دستوری عمل کا بھی احترام لازم ہے ۔ لبنان کے وزیراعظم سعد الحریری کی سعودی عرب میں اپنے استعفیٰ کے اعلان کے چند دنوں بعد امریکہ نے کہا کہ سعد الحریری ہمارے با اعتماد رفیق ہیں ۔ حریری نے گذشتہ ہفتہ ایک ٹی وی نشریہ میں ریاض سے اعلان کیا تھا کہ وہ استعفیٰ دے رہے ہیں کیوں کہ ان کی زندگی کو نامعلوم ذرائع سے خطرہ ہے ۔ انہوں نے حزب اللہ اور ایران پر بھی تنقید کی تھی ۔ ایران اور اس کی حلیف لبنانی شیعہ گروپ حزب اللہ کا دعویٰ ہے کہ سعودی عرب نے سعد الحریری کو حراست میں رکھا ہے اور ان سے دباؤ ڈال کر استعفیٰ حاصل کرلیا ہے ۔ سعد الحریری کی ستائش کرتے ہوئے وائیٹ ہاوز نے کہا کہ وہ امریکہ کے باعتماد دوست ہیں اور پناہ گزینوں کا تحفظ کررہے ہیں ۔ دہشت گردی کا مقابلہ کررہے ہیں ۔ ایسے نازک وقت میں امریکہ بھی لبنان کے اندر پیدا ہونے والی عسکری کوششوں کو مسترد کرتا ہے ۔ فرانس کے وزیر خارجہ نے وضاحت کی کہ ان کے خیال میں لبنان کے مستعفی وزیراعظم سعد الحریری سعودی عرب میں نظر بند نہیں ہیں ۔ ان کے سفر اور نقل و حرکت پر کوئی پابندی نہیں ہے ۔ لبنان کی تنظیم حزب اللہ نے سعودی عرب پر لبنان کے خلاف جنگ مسلط کرنے کا الزام عائد کیا ہے جب کہ امریکہ نے اپنی لڑائی میں لبنان کی استعمال کرنے والے ممالک کو خبردار کیا ہے ۔ ایک ٹیلی ویژن تقریر میں حزب اللہ کے رہنما حسن نصر اللہ نے زور دیا کہ حریری کا استعفیٰ لبنانی سیاست میں بے مثال سعودی مداخلت بھی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ سعودی حکومت نے وزیراعظم لبنان کو سعد الحریری کو ان کی مرضی کے خلاف وہاں رکھا ہے ۔واضح رہے کہ لبنان کی سیاسی صورتحال میں دن بہ دن ابتری پیدا ہورہی ہے۔ کئی ممالک نے اپنے شہریوں کو خبردار کیا ہے کہ وہ لبنان کا سفر نہ کریں۔ حال ہی میں سعودی عرب نے بھی لبنان میں مقیم اپنے شہریوں کو واپسی کا مشورہ دیا تھا۔

TOPPOPULARRECENT