Saturday , November 18 2017
Home / Top Stories / لندن کی زیرزمین ٹرین میں دھماکہ ، 22 افراد زخمی

لندن کی زیرزمین ٹرین میں دھماکہ ، 22 افراد زخمی

اکثر افراد کے چہرے جھلس گئے ، وزیراعظم تھریسامے کااظہار تشویش ، دہشت گرد واقعہ :اسکاٹ لینڈ یارڈ

لندن ۔ /15 ستمبر (سیاست ڈاٹ کام) برطانوی دارالحکومت لندن میں ایک زیرزمین مصروف ریلوے اسٹیشن پر صبح کے مصروف اوقات کے دوران ایک عصری افسردہ دھماکو مواد کا دھماکہ ہوا جس کے نتیجہ میں کم سے کم 22 افراد زخمی ہوگئے ۔ اسکاٹ لینڈ یارڈ نے اس کو دہشت گرد واقعہ قرار دیا ۔ جنوب مغربی لندن کے پارسنس گرین اسٹیشن کے قریب ڈسٹرکٹ لائن ٹیوٹ میں یہ دھماکہ ہوا ۔ برطانوی پولیس پر کلیدی شعبہ اسکاٹ لینڈ یارڈ نے شبہ ظاہر کیا ہے کہ ’’بکٹ بم ‘‘ دھماکہ ہوا اور اس واقعہ کی دہشت گرد حملہ کی حیثیت سے تحقیقات کی جارہی ہے ۔اکثر زخمی افراد جھلسنے کے سبب متاثر ہوئے ہیں ۔ اسسٹنٹ کمشنر مارک رولے نے کہا کہ ایک عصری دھماکو آلہ سے دھماکہ کیا گیا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ لندن بالخصوص ٹرانسپورٹ نٹورک میں مزید پولیس تعینات کی جارہی ہے ۔ تاہم انہوں نے یہ بتانے سے انکار کردیا کہ اس ضمن میں آیا کسی کو گرفتار کیا گیا ہے ۔ برطانوی میڈیا نے اپنی خبروں کے ساتھ سوپر مارکٹ کے ایک بیاگ میں جھلستی ہوئی سفید بکٹ کی تصاویر بھی جاری کی جس کے وائر ٹرین کے فرش پر پڑے تھے ۔ بیان کیا جاتا ہے کہ متعدد افراد کے چہرے جھلس گئے ہیں اور ہجوم سے نکل کر محفوظ مقام کی طرف دوڑنے کی کوشش میں چند دوسرے زخمی ہوگئے ۔ اسکاٹ لینڈ یارڈ کے انسداد دہشت گردی اسکواڈ ایسSO15 اس واقعہ کے فوری بعد پارسنس گرین ٹیوب اسٹیشن پہونچ گئی اور برطانوی ٹرانسپورٹ پولیس سے تحقیقات کی قیادت حاصل کرلی ۔ ڈپٹی اسسٹنٹ کمشنر نیل باسو نے جو انسداد دہشت گردی پولیس کے سینئر قومی رابطہ کار ہیں ۔ اس واقعہ کو دہشت گرد حملے قرار دیا ہے ۔ پولیس نے اپنے ایک بیان میں کہا کہ ’’میٹرو پولیٹین پولیس سرویس اور برطانوی ٹرانسپورٹ نے مقام واقعہ کا خاتمہ بریگیڈ رفقاء اور لندن امبولنس سرویس کے ذمہ داروں کے ساتھ معائنہ کیا اور فی الحال ہم زخمی افراد کی تعداد سے باخبر ہیں ‘‘ ۔ پولیس بیان میں مزید کہا گیا ہے کہ ’’دھماکو اور آگ کی وجوہات کی اس مرحلہ پر توثیق قبل از وقت ہوگی کیونکہ مزید تحقیقات کے بعد ہی اصل وجہ کا علم ہوسکتا ہے جس کے لئے میٹرو انسداد دہشت گردی کمانڈ کی تحقیقات جاری ہیں ۔ پولیس نے اس اسٹیشن کی ناکہ بندی کرلی ہے اور ہم نے عوام کو اس علاقہ پر پہونچنے سے گریز کا مشورہ دیا ہے ‘‘ ۔ وزیراعظم کے دفتر ڈاؤننگ اسٹریٹ نے کہا ہے کہ تھریسا مے صورتحال پر رابطہ میں ہیں اور وقفہ وقفہ سے معلومات حاصل کررہی ہیں ۔ تھریسامے نے ٹوئیٹر پر لکھا کہ ’’پارسنس ٹرین کے زخمیوں اور ان کی راحت کیلئے مصروف ہنگامی خدمات کے بارے میں فکرمند ہوں جو اس دہشت گرد واقعہ کا جرائتمندی سے نمٹ رہے ہیں ‘‘ ۔

TOPPOPULARRECENT