Wednesday , December 12 2018

لنگایت طبقہ کو اقلیتی موقف انتخابی شعبدہ بازی

کرناٹک کی کانگریس حکومت کے اقدام پر یدی یورپا کی تنقید
بنگلورو۔ 21 مارچ (سیاست ڈاٹ کام) کرناٹک بی جے پی یونٹ کے صدر بی ایس یدی یورپا نے آج کہا کہ ویرشائیور لنگایت طبقہ کو اقلیتی موقف دینے ریاستی حکومت کا اقدام محض ’’انتخابی شعبدہ بازی‘‘ ہے۔ انہوں نے چیف منسٹر سدارامیا پر جذباتی مسائل پر عوام کو منقسم کرنے کا الزام بھی عائد کیا۔ یدی یورپا لنگایت طبقہ کے طاقتور لیڈر ہیں اور کرناٹک کے اسمبلی انتخابات میں چیف منسٹر کے عہدہ کیلئے بی جے پی کے امیدوار ہیں۔ انہوں نے کانگریس کی ریاستی حکومت کی جانب سے لنگایت برادری کو اقلیتی موقف دینے کا مسئلہ اٹھانے کی ضرورت پر بھی سوال کیا اور یاد دلایا کہ ماضی میں مرکز میں کانگریس کی زیرقیادت یو پی اے حکومت نے لنگایتوں کیلئے علحدہ مذہب کے موقف کو مسترد کردیا تھا۔ یدی یورپا نے یہاں اخباری نمائندوں سے بات چیت کرتے ہوئے کہا کہ ’’سدارامیا‘‘ جذباتی مسائل پر عوام کو منقسم کررہے ہیں۔ صرف ایک لنگایت ویرا سائیوا کی بات ہی نہیں ہے۔ لنگایتوں کو مذہبی موقف دینے کا اقدام انتخابی شعبدہ بازی ہے۔ یہ عوام کو گمراہ کرنے کی کوشش ہے‘‘۔ بی جے پی کے ریاستی صدر نے اس حساس مسئلہ پر اپنی پارٹی کے موقف کی وضاحت کرتے ہوئے کہا کہ اکھل بھارتیہ ویرنائیوا مہاسبھا کی طرف سے کئے جانے والے فیصلے کی پابندی کرنا چاہئے۔ یدی یورپا نے یہ جاننے کی خواہش کی کہ آیا سدارامیا دیگر مختلف طبقات کے مطالبات کی تکمیل کرسکتے ہیں‘‘ اور دریافت کیا کہ آیا ان کے اس اقدام کے پیچھے کیا مقاصد ہیں۔ یدی یورپا نے کانگریس کے صدر راہول گاندھی کی مختلف ریالیوں پر بھی تنقید کی اور اس یقین کا اظہار کیا کہ کرناٹک اسمبلی کی 224 کے منجملہ بی جے پی کو 140 نشستوں پر کامیابی حاصل ہوگی۔

TOPPOPULARRECENT