Sunday , June 24 2018
Home / عرب دنیا / لیبیا میں خام تیل کی فروخت کا تنازعہ مزید بگڑگیا

لیبیا میں خام تیل کی فروخت کا تنازعہ مزید بگڑگیا

طرابلس ، 10 مارچ (سیاست ڈاٹ کام) لیبیا میں خام تیل کی فروخت کا تنازعہ مزید بگڑتا جا رہا ہے۔ حکومت مخالف باغیوں نے تین بندرگاہوں پر قبضہ کر رکھا ہے اور اب وہ تیل کو بیرون ملک فروخت کرتے ہوئے آمدنی خود حاصل کرنا چاہتے ہیں۔ طرابلس حکومت نے کہا ہے کہ السدر نامی بندرگاہ سے تیل ایکسپورٹ کیا گیا تو جہاز پر بمباری کرتے ہوئے اسے تباہ کر دیا جا

طرابلس ، 10 مارچ (سیاست ڈاٹ کام) لیبیا میں خام تیل کی فروخت کا تنازعہ مزید بگڑتا جا رہا ہے۔ حکومت مخالف باغیوں نے تین بندرگاہوں پر قبضہ کر رکھا ہے اور اب وہ تیل کو بیرون ملک فروخت کرتے ہوئے آمدنی خود حاصل کرنا چاہتے ہیں۔ طرابلس حکومت نے کہا ہے کہ السدر نامی بندرگاہ سے تیل ایکسپورٹ کیا گیا تو جہاز پر بمباری کرتے ہوئے اسے تباہ کر دیا جائے گا۔ اس کے جواب میں لیبیا کے مشرقی علاقے برقہ میں مزید خودمختاری کا مطالبہ کرنے والے اور خود کو وزیراعظم قرار دینے والے باغیوں کے سربراہ عبد ربو البرعصی کا کہنا ہے کہ جس کسی نے بھی حملہ کیا، اسے منہ توڑ جواب دیا جائے گا۔ ابھی تک یہ واضح نہیں ہے کہ باغیوں سے تیل کون سی کمپنی یا ملک خریدنا چاہتا ہے۔

TOPPOPULARRECENT