Friday , November 24 2017
Home / شہر کی خبریں / مارواڑی ریمارک پر وزیر کا اور ردعمل پر جی کشن ریڈی کا اظہار ندامت

مارواڑی ریمارک پر وزیر کا اور ردعمل پر جی کشن ریڈی کا اظہار ندامت

اسمبلی میں اچھی روایت ، اسپیکر مدھو سدن چاری کی ستائش
حیدرآباد ۔ 23 ۔ مارچ : ( سیاست نیوز ) : آج صبح اسمبلی کا آغاز معذرت خواہی کے ساتھ ہوا ۔ ریاستی وزیر برقی جگدیش ریڈی نے لفظ مارواڑی کے استعمال پر افسوس کا اظہار کرتے ہوئے معذرت خواہی کا اظہار کیا ۔ بی جے پی کے قائد مقننہ جی کشن ریڈی نے احتجاج کرتے ہوئے اسپیکر کے پوڈیم کے قریب پہونچنے پر افسوس کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ اس حرکت پر وہ رات بھر سو نہیں پائے اور وہ بھی معذرت خواہی کرتے ہیں ۔ اسپیکر اسمبلی مدھوسدن چاری اور وزیر امور مقننہ ہریش راؤ نے دونوں ارکان کو اپنی غلطی کا اعتراف کرتے ہوئے اسمبلی میں اچھی روایت قائم کرنے کی ستائش کی ۔ روزانہ اسمبلی کے آغاز کے ساتھ ہی وقفہ سوالات شروع ہوتا ہے ۔ تاہم آج وزیر برقی جگدیش ریڈی نے کل کے واقعہ پر اسمبلی میں ردعمل کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ انہوں نے کوئی غیر پارلیمانی الفاظ کا استعمال نہیں کیا اگر کیا ہے تو ریکارڈ سے اس کو حذف کردیا جائے ۔ اگر ان کے الفاظ سے کسی کی دل آزاری ہوئی ہے تو وہ معذرت خواہی کرتے ہیں لفظ مارواڑی کے استعمال پر بھی انہیں افسوس ہے ۔ وہ مرکز سے تجارت جیسی پالیسی اپنانے کا ریمارک کرنا چاہتے تھے ۔ وہ کہنا کچھ چاہتے تھے مگر کچھ اور ہی کہہ گئے ہیں ۔ بی جے پی کے فلور لیڈر جی کشن ریڈی نے کہا کہ وہ گذشتہ 13 سال سے اسمبلی کی نمائندگی کرتے ہیں لیکن انہوں نے کبھی بھی کسی بھی مسئلہ پر احتجاج کرتے ہوئے اسپیکر کے پوڈیم کے قریب نہیں پہونچے لیکن وزیر برقی نے کل مرکز پر تنقید کرنے کے لیے سماج کے ایک طبقہ مارواڑی کا حوالہ دیا ہے ۔ جس پر وہ بطور احتجاج اسپیکر کے پوڈیم کے قریب پہونچے مگر کل کے اس واقعہ پر وہ بے حد شرمندہ ہے اور رات بھر وہ نہیں سو پائے ہیں ۔ وزیر برقی جگدیش ریڈی اگر آج اپنی غلطی کا اعتراف نہیں بھی کرتے وہ اپنی طرف سے افسوس کا اظہار تو ضرور کرنے آئے تھے ۔ وزیرامور مقننہ ہریش راؤ نے حکمران اور اپوزیشن دونوں کی جانب سے اپنی غلطیوں کا اعتراف کرنے کی ستائش کرتے ہوئے مسئلہ کو یہی ختم کرنے کا مشورہ دیا اسپیکر اسمبلی نے بھی کہا کہ دونوں ارکان کی جانب سے اچھی روایت قائم کی ہے جو صحت مندانہ جمہوری نظام کی نشانی ہے ۔ اس کو مزید طول دینے کے بجائے مسئلہ کو یہی ختم کردینے پر زور دیا ۔۔

TOPPOPULARRECENT