Friday , May 25 2018
Home / دنیا / مالدیپ : حتمی ووٹ سے قبل باغی ممبران پارلیمنٹ کی معطلی

مالدیپ : حتمی ووٹ سے قبل باغی ممبران پارلیمنٹ کی معطلی

اعلیٰ عدالت نے اپنے سابقہ فیصلے کو منسوخ کرتے ہوئے 12 ممبران کو معطل کیا
مالے ۔ 19 فروری (سیاست ڈاٹ کام) مالدیپ کی اعلیٰ عدالت نے حتمی پارلیمانی ووٹ سے قبل 12 اپوزیشن مخالف ممبر آف پارلیمنٹ کو معطل کردیا ہے۔ عدالت کے اس فیصلے سے مضطرب جزیرے پر اپنی حکمرانی کی گرفت مضبوط رکھنے والے صدر عبداللہ یامین کو تھوڑی سی راحت ملی ہے۔ اتوار کو اپنے فیصلے میں اعلیٰ عدالت نے اپنے اصل فیصلے کو پلٹ دیا ہے کہ جس میں اس نے ان ممبران کو راحت دیتے ہوئے بحال کردیا تھا جوکہ حکمراں جماعت کی جانب سے معطل کئے گئے تھے۔ عدالت کا فیصلہ ایک ایسے وقت میں آیا ہے جب پارلیمنٹ صدر عبداللہ کی جانب سے اعلان کردہ ایمرجنسی سے دوبارہ امن کی حالت میں بحالی کی تیاری کررہا ہے۔ یکم ؍ فروری کے اپنے فیصلے میں عدالت نے 12 خطاوار ممبر آف پارلیمنٹ کو صدر کے پارٹی کو اقلیت میں ہونے کو کم کرتے ہوئے معطل کردیا تھا۔ عدالت کے حالیہ فیصلہ سے یامین کو 85 ممبران کی لیجسلیچر میں اکثریت حاصل ہوگئی ہے۔ تین رخی بنچ نے اپنا فیصلہ سناتے ہوئے کہا کہ اٹارنی جنرل کی درخواست پر عدالت اپنے یکم ؍ فروری کے فیصلے کو منسوخ کرتی ہے جس میں سیاستدانوں کے بحال کا فیصلہ صادر کیا گیا تھا۔ واضح رہے کہ صدر یامین کے دو ہفتہ قبل چیف جسٹس اور دیگر اعلیٰ ججوں کے گرفتاری کے آرڈر کے بعد سے اعلیٰ عدالت کا یہ دوسرا معاملہ ہے جب وہ اپنے فیصلے سے پلٹ گئی ہے۔ اس مہینے کی شروعات میں موجودہ ججوں نے یامین کے اہم حریف اور دوسرے سیاسی قیدیوں کے رہائی کے اپنے حالیہ فیصلے واپس لے لیا تھا۔

TOPPOPULARRECENT