Wednesday , September 19 2018
Home / شہر کی خبریں / مالیاتی خسارہ سے نمٹنے کیلئے حکومت کے اقدامات

مالیاتی خسارہ سے نمٹنے کیلئے حکومت کے اقدامات

حیدرآباد و سکندرآباد میں سرکاری دفاتر اور اراضی کو فروخت کرنے کا منصوبہ

حیدرآباد و سکندرآباد میں سرکاری دفاتر اور اراضی کو فروخت کرنے کا منصوبہ
حیدرآباد 9 فبروری (سیاست نیوز) تلنگانہ حکومت نے مالیاتی خسارہ سے نمٹنے کیلئے دونوں شہروں و حیدرآباد وسکندر آباد میں سرکاری دفاتر و اراضیات کو فروخت کرنے کا منصوبہ بنایا ہے ۔ پہلے مرحلے میں دونوں اضلاع میں جن سرکاری اراضیات اور دفاتر کی نشاندہی کی گئی ان سے 10 ہزار کروڑ کی آمدنی کا نشانہ مقرر کیا گیا ہے۔ حکومت نے حیدرآباد سے تمام اہم سرکاری دفاتر اور سکریٹریٹ کو ایرہ گڈہ کے چسٹ ہاسپٹل کی اراضی تعمیر ہونے والے نئے کامپلکس میں منتقل کرنے کا فیصلہ کیا ہے 150 کروڑ کی لاگت سے سکریٹریٹ کی نئی عمارت تعمیر کی جائے گی جس میں تمام محکمہ جات کے ہیڈ آف دی ڈپارٹمنٹس کے دفاتر بھی موجود رہیں گے ۔ چیف سکریٹری راجیو شرما نے حیدرآباد اور رنگا ریڈی کے کلکٹرس سے ان کے حدود میں موجود سرکاری دفاتر اور اراضیات کی تفصیلات طلب کی ہے ۔ بتایا جاتا ہے کہ حیدرآباد کلکٹر کی جانب سے 436 سرکاری دفاتر کی نشاندہی کی گئی اس کے علاوہ 1150 ایکر اراضی کی موجودگی کی بھی نشاندہی کی گئی ۔ اس کی فروخت سے حکومت کو 10 ہزاکروڑ کی آمدنی ہوسکتی ہے ۔ بتایا جاتا ہے کہ کلکٹر حیدرآباد نے حکومت کو جو رپورٹ پیش کی اس میں 14.2 ایکر اراضی پر سرکاری دفاتر کی موجودگی کا انکشاف کیا گیا۔ چراغ علی لین عابڈس میں واقع حیدرآباد کلکٹریٹ 5769 مربع گز یعنی تقریبا 10 ایکڑ اراضی پر محیط ہے ۔ کلکٹر حیدرآباد نے اس کے حدود میں موجود دفاتر کے سلسلہ میں جو رپورٹ پیش کی اس میں محکمہ مال کے دفاتر کی بطورخاص نشاندہی کی گئی ہے ۔ ریونیو دفاتر میں شیخ پیٹ منڈل آفس 2389 مربع گز اراضی پر محیط ہے جبکہ حمایت نگر منڈل آفس 2056 مربع گز پر قائم ہیں ۔ اس کے علاوہ بنڈلہ گوڑہ ریونیو آفس 1797 ‘ ترملگیری 1217‘ مشیر آباد 1058 ‘بہادر پورہ 1050‘ گولکنڈہ 627‘ عنبر پیٹ 591‘گوشہ محل 580 ‘سکندرآباد 503 ‘حیدرآباد آر ڈی او (نامپلی)480 ‘خیرت آباد 412 اور چارمینار 405 مربع گز اراضی پر محیط ہے۔ رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ حیدرآباد اور رنگا ریڈی میں 255 سرکاری دفاتر اپنی عمارت میں موجود ہیں جبکہ 900 ایکر اراضی پر کوئی تعمیرات نہیں ہیں ۔ حکومت دونوں اضلاع میں 436 سرکاری عمارتوں اور 1150 ایکر اراضی کی فروخت کا منصوبہ بنا رہی ہے ۔

TOPPOPULARRECENT