Wednesday , January 24 2018
Home / سیاسیات / مایاوتی نے بی ایس بی کی تمام کمیٹیاں تحلیل کردیں

مایاوتی نے بی ایس بی کی تمام کمیٹیاں تحلیل کردیں

لکھنو 20 مئی (سیاست ڈاٹ کام ) لوک سبھا انتخابات میں بدترین مظاہروں میں سے ایک کا سامنا کرنے والی بی ایس پی کی سربراہ و سابق چیف منسٹر یو پی مایاوتی نے پارٹی کی تمام کمیٹیاں تحلیل کردیں۔بی ایس پی کی صدر نے پارٹی کے عہدیداروں اور قائدین کے ساتھ ایک اجلاس میں پارٹی کی انتخابی کارکردگی کا جائزہ لیااور تمام ضلعی ،اسمبلی اور ریاستی سطح کی ک

لکھنو 20 مئی (سیاست ڈاٹ کام ) لوک سبھا انتخابات میں بدترین مظاہروں میں سے ایک کا سامنا کرنے والی بی ایس پی کی سربراہ و سابق چیف منسٹر یو پی مایاوتی نے پارٹی کی تمام کمیٹیاں تحلیل کردیں۔بی ایس پی کی صدر نے پارٹی کے عہدیداروں اور قائدین کے ساتھ ایک اجلاس میں پارٹی کی انتخابی کارکردگی کا جائزہ لیااور تمام ضلعی ،اسمبلی اور ریاستی سطح کی کمیٹیوں کو تحلیل کردیا ۔ بی ایس پی کے ذرائع کے بموجب مایاوتی کی پارٹی کے سبکدوش ہونے والی لوک سبھا میں 20 ارکان پارلیمنٹ تھے لیکن حال ہی میں اختتام پذیر لوک سبھا انتخابات میں پارٹی ایک بھی رکن پارلیمنٹ کی نشست حاصل نہیں کرسکی۔ پارٹی کے صدر اب تمام کمیٹیوں کی حقائق کا جائزہ لینے کے بعد تشکیل جدید کریں گی۔ پارٹی ان میں سے چند کے کردار میں نئی ہم آہنگی پیدا کریں گی جو انتخابات میں اپنے ناقص مظاہرے کی وجہ سے تنقید کا نشانہ بنی ہے ۔ ذرائع کے بموجب رابطہ کمیٹیوں پر پارٹی کی صدر کو لوک سبھا انتخابات کی تیاریوں کے بارے میں اور عوام کے رجحان کے بارے میں گمراہ کیا گیا تھا ۔ پارٹی کی صدر نے قائدین کے ساتھ تبادلہ خیال کیا اور ان سے وہ وجوہات دریافت کی جس کی وجہ سے پارٹی کا مظاہرہ خاص طور پر یو پی میں بد ترین رہا اور اس کے رائے دہی کے فیصد میں بھی کمی آئی ۔ مایاوتی نے پارٹی قائدین پرسخت تنقید کی اور انتخابات کے دوران ان کی کوتاہی کو تنقید کا نشانہ بنایا ۔ بی ایس پی کی صدر نے نشاندہی کی کہ وہ پارٹی کی تنظیم جدید کریں گی تا کہ آئندہ اسمبلی انتخابات کی تیاری کی جاسکے اور کارکنوں میں نئی جان ڈالی جاسکے ۔

TOPPOPULARRECENT