Saturday , June 23 2018
Home / Top Stories / ’’مجھے پرنب دا سے ایسی توقع نہیں تھی‘‘

’’مجھے پرنب دا سے ایسی توقع نہیں تھی‘‘

سابق صدرجمہوریہ کی آر ایس ایس ایونٹ میں شرکت پر احمد پٹیل کا دردعمل
نئی دہلی ۔ 7 جون (سیاست ڈاٹ کام) کانگریس کے سینئر قائد احمد پٹیل نے سابق صدرجمہوریہ ہند پرنب مکرجی کے ناگپور میں آر ایس ایس ہیڈکوارٹرس جانے پر ناراضگی کا اظہار کیا اور کہا کہ انہیں ان سے اس کی توقع نہیں تھی۔ احمد پٹیل، جو یو پی اے چیرپرسن سونیا گاندھی کے بااعتماد قریبی ساتھی اور ان کے پولیٹیکل سکریٹری ہیں، نے پرنب مکرجی کی دختر کے جواب میں، جنہوں نے آر ایس ایس ایونٹ سے مخاطب کرنے سابق صدرجمہوریہ کے فیصلہ کے خلاف بات کی ہے، ٹوئیٹر پر ان کے نظریہ کا اظہارکیا ہے۔ پٹیل نے ان کے ایک سطر کے ٹوئیٹ میں کہا ’’مجھے پرنب دا سے اس کی توقع نہیں تھی‘‘۔ کانگریس لیڈر شرمستا مکرجی نے کل کہا تھا کہ ان کے والد بی جے پی اور سنگھ کو جھوٹی کہانیاں بنانے میں گویا مدد کررہے ہیں۔ انہوں نے ٹوئیٹر پر کہا کہ ’’ان کی تقریر کو بھلا دیا جائے گا لیکن تصاویر باقی رہیں گے۔ انہوں نے اس امید کا بھی اظہار کیا کہ سابق صدرجمہوریہ کو یہ معلوم ہوگا اور یہ محسوس کریں گے کہ بی جے پی کا ’’ڈرٹی ٹریکس ڈپارٹمنٹ‘‘ کس طرح کام کرتا ہے اور انہیں اس طرح کے ایونٹ میں شرکت کرنے کے عواقب نتائج سے خبردار کیا۔ پرنب مکرجی آج ناگپور میں ہیں جہاں وہ شام میں آر ایس ایس کے ایک ایونٹ سے خطاب کریں گے۔ اس دورہ سے کئی خیالات پیدا ہوئے ہیں اور اس کی مخالفت کانگریس اور ان کے ’’پریوار‘‘ دونوں کی جانب سے کی گئی ہے۔ بعض کانگریس قائدین بشمول جئے رام رمیش اور سی کے جعفر شریف نے انہیں مکتوب تحریر کئے ہیں جبکہ پارٹی کے چند قائدین بشمول آنند شرما نے انہیں ناگپور جانے سے روکنے اور اس سے باز رکھنے کیلئے پرنب مکرجی سے شخصی طور پر ملاقات کی۔ سابق ایم پی اور کانگریس قائد سندیپ ڈکشیٹ نے کہا کہ وہ شرمستا مکرجی سے متفق ہیں۔ انہوں نے کہا کہ وہ اب کوئی سیاسی شخص نہیں رہے اور نہ ہی راست طور پر کانگریس سے وابستہ ہیں۔

TOPPOPULARRECENT