Friday , September 21 2018
Home / اضلاع کی خبریں / محبوب نگر میں تلگودیشم پارٹی کو زبردست جھٹکہ

محبوب نگر میں تلگودیشم پارٹی کو زبردست جھٹکہ

نامورقائد این پی وینکٹیش مستفعی ‘ کئی اقلیتی قائدین نے پارٹی کو خیراباد کہدیا

محبوب نگر ۔ 15؍ اپریل (سیاست ڈسٹرکٹ نیوز) تلگودیشم کے نامور قائد و ممتاز قانون داں این پی وینکٹیش ‘ تلگودیشم انچارج حلقہ اسمبلی محبوب نگر نے آج تلگودیشم کو خیرباد کہدیا ۔ انہوں نے اپنی قیام گاہ پر ایک پرہجوم پریس کانفرنس میں تلگودیشم سے مستعفی ہونے کا اعلان کر دیا ۔ انہوں نے بتایا کہ وہ اپنا مکتوب استعفی این چندرابابونائیڈو کو بذریعہ فیاکس روانہ کرچکے ہیں۔ انہوں نے اخباری نمائندوں کو بتایاکہ مستعفی ہونے کا فیصلہ اگرچیکہ تکلیف دہ ہے لیکن عوامی خدمات کے تناظر میں یہ ضروری ہوگیا تھا ۔ ریاستی تلگودیشم قائدین کے رویہ اور ان کی سردمہری کے اثرات کا پارٹی کے وجود پر برا اثر پڑا ہے جس کے نتیجہ میں عوامی خدمات کا جو نشانہ انہوں نے مقرر کیا تھا وہ پورا ہوتا نظر نہیں آ رہا تھا ۔ انہوں نے بتایا کہ وہ تلگودیشم کے قیام 1982 سے ہی پارٹی سے وابستہ رہے جبکہ وہ ایم وی ایس ڈگری کالج اسٹوڈنٹس یونین کے صدر تھے ۔ انہوں نے بتایاکہ تلگودیشم کی ریاستی قیادت مستقبل پر اپنا واضح موقف ظاہر کرنے میں ناکام ہوگئی ہے ۔ اور آئندہ انتخابات میں وہ مفاہمت کے لئے کیا پالیسی اپنانے والی ہے اس سے بھی ضلع سطح کی قیادت کو اندھیرے میں رکھا گیا ہے جس کے سبب وہ تلگودیشم میں گٹھن محسوس کر رہے تھے ۔ انہوں نے چندرابابونائیڈو کو بہترین اور جراتمند سیاستداں قرار دیا ۔ صمد خان نائب صدر ضلع تلگودیشم نے بھی استعفی دے دیا اور کہا کہ اعلیٰ قائدین کا رویہ ضلع سطح کے قائدین کے ساتھ نامناسب ہے اور وہ اقلیتی مسائل کی نمائندگی پر ہچکچاہٹ کا شکار ہو رہے تھے۔ انہوں نے کہا کہ اب وہ کسی اور سیاسی جماعت سے وابستہ ہوں گے تو اس کی بنیاد یہی ہوگی کہ وہ اقلیتوں کی ترقی کے لئے کیا اقدامات کرے گی ۔ این پی وینکیٹش ایڈوکیٹ کے ساتھ مستعفی ہونے والوں میں کئی ایک ضلع قائدین جناب اقبال احمد سابق صدر ضلع اقلیتی سل ‘ الطاف احمد خان ٹاؤن جنرل سکریٹری ‘ فضل احمد ٹاؤن پریسیڈنٹ ‘ مجاہد علی انصاری سینئر لیڈر ‘ محمد سرور ‘ محمد حنیف ‘ فیاض احمد ‘ مرزا قادر بیگ ‘ یادیا‘ لکشمی اکا ‘ گنجی یادیا ‘ کوٹا لکشمی ‘ سوریہ نارائنا و دیگر شامل تھے ۔

TOPPOPULARRECENT