Tuesday , December 12 2017
Home / اضلاع کی خبریں / محبوب نگر میں شرپسندی ، مسجد پر پتھراؤ

محبوب نگر میں شرپسندی ، مسجد پر پتھراؤ

آئینے کو نقصان ، اشرار کے خلاف کارروائی کا مطالبہ
محبوب نگر ۔ /10 فبروری (سیاست ڈسٹرکٹ نیوز) مستقر محبوب نگر کی مصروف ترین شاہراہ حیدرآباد رائچور روڈ کے پرہجوم علاقہ میں واقع مسجد رحمانیہ پر نامعلوم اشرار نے پھتراؤ کرتے ہوئے مسجد کے آئینوں کو نقصان پہونچایا اور مسجد کی بے حرمتی کی ۔ رات دیر گئے کی گئی اس شرپسندی کی اطلاع پاتے ہی محمد عبدالہادی ایڈوکیٹ و کونسلر ، سید سعادت اللہ حسینی نمائندہ کونسلر ، محمد عبدالجبار مجاہد ، محمد عبدالرحمن و دیگر نے فوری مسجد پہونچکر تفصیلات حاصل کیں اور ڈی ایس پی کرشنا مورتی اور سرکل انسپکٹر کو اس شرارت کی اطلاع دی ۔ ان تمام قائدین نے اشرار کو گرفتار کرنے اور سخت ترین سزاء کا مطالبہ کیا اور کہا کہ وقفہ وقفہ سے ایسے واقعات پولیس کی کارکردگی پر سوالیہ نشان ہیں ۔ مسجد کمیٹی کے سکریٹری محمد عبدالماجد کی تحریری شکایت پر پولیس نے اشرار کے خلاف مقدمہ درج کرکے تحقیقات کا آغاز کردیا ۔ اس موقع پر محمد سلطان ٹی آر ایس اقلیتی قائد و دیگر نوجوان موجود تھے ۔ محمد عبدالہادی ایڈوکیٹ و کونسلر ، مقصود بن احمد ذاکر ایڈوکیٹ ، سید سعادت اللہ حسینی نمائندہ کونسلر ، محمد الیاس مجاہد ، محمد عبدالمعبود نے اپنے صحافتی بیان میں گزشتہ شب مسجد رحمانیہ پر پتھراؤ اور بے حرمتی کے واقعہ پر شدید احتجاج کیا اور کہا کہ اس سے قبل بھی مسجد کی دو مرتبہ بے حرمتی کی گئی تھی ۔ دو ماہ قبل مسجد کے لاؤڈ اسپیکر کی چوری کی گئی ۔ ایسی مصروف سڑک پر مسجد کے تقدس کی پامالی سے پولیس کی نااہلی کا اندازہ ہوتا ہے ۔ انہوں نے مزید کہا کہ گزشتہ دنوں میں رامیا باؤلی میں مندر کی بے حرمتی کا الزام لگاکر کثیر تعداد میں مسلم نوجوانوں کو گرفتار کیا گیا تھا اور سپرد عدالت کیا گیا تھا لیکن مسلمانوں کی درخواست پر پولیس بھول جاؤ اور معاف کردو کا مشورہ دیتی ہے ۔ ان قائدین  نے خاطیوں کو فوری گرفتار کرنے اور سخت ترین سزاء دینے کا مطالبہ کیا  ۔

TOPPOPULARRECENT