Saturday , November 25 2017
Home / کھیل کی خبریں / محمد عامر تربیتی کیمپ میں معافی کے بعد روپڑے

محمد عامر تربیتی کیمپ میں معافی کے بعد روپڑے

کراچی۔ 27 ڈسمبر (سیاست ڈاٹ کام )لاہور میں پاکستانی کرکٹ ٹیم کے تربیتی کیمپ میں جذباتی ماحول دیکھنے میں آیا۔ ایک موقع پر محمد حفیظ کی آنکھوں سے آنسو رواں ہوگئے اور محمد عامر ساتھی کھلاڑیوں سے معافی مانگتے ہوئے روپڑے۔عینی شاہدین کے مطابق ونڈے کپتان اظہر علی اور محمد حفیظ کی جانب سے محمد عامر کے ساتھ کھیلنے پر اعتراض کے بعد پاکستان کرکٹ بورڈ نے وقار یونس ،ہارون رشید کے ساتھ ٹیم انتظامیہ اور کھلاڑیوں کی ایک اجلاس طلب کیا  اور اس کے آغاز میں اظہر علی اور محمد حفیظ موجود نہیں تھے۔اجلاس میں ماحول اس وقت جذباتی ہوگیا جب محمد عامر نے ساتھی کھلاڑیوں سے ایک مرتبہ پھر اپنے عمل پر معافی مانگی اور کہا کہ اگر ساتھی کھلاڑی نہیں چاہتے تو میں کرکٹ چھوڑنے کو تیار ہوں۔عامر آبدیدہ تھے کہ اسی دوران اظہر علی اور حفیظ اجلاس کے لئے اکیڈمی میں داخل ہوئے اس وقت عامر نے ان سے بھی معافی مانگی اور کہا کہ اگر آپ چاہتے تو میں کرکٹ چھوڑ سکتا ہوں۔ ذرائع کے مطابق اس صورتحال میں اظہر اور حفیظ نے انہیں گلے لگایا۔ ساتھی کھلاڑیوں کو اپنا موقف بیان کرتے ہوئے حفیظ بھی روپڑے۔ انہیں بھی ساتھی کھلاڑیوں نے دلاسہ دیا۔ 23 سالہ محمد عامر نے ٹیم مینجمنٹ اور کھلاڑیوں سے کہا ہے کہ اگر ان کے کیمپ میں شرکت سے پاکستان کی کرکٹ داغ دار ہورہی ہے تو وہ کیمپ میں شرکت نہیں کریں گے تاہم ٹیم مینجمنٹ اور کھلاڑیوں نے فاسٹ بولر کو سمجھایا کہ انہوں نے اپنے کیے کی سزا کاٹ لی ہے لہٰذا اب وہ کیمپ چھوڑنے کی باتیں کرنے کی بجائے اپنی پریکٹس پر توجہ مرکوز رکھ کر ٹیم میں جگہ بنانے کی کوشش کریں۔

عامر کی واپسی پر کسی کو اعتراض کا حق نہیں :اکرم
لاہور۔27 ڈسمبر (سیاست ڈاٹ کام )پاکستانی سابق کپتان وسیم اکرم نے کہا ہے کہ محمد عامر کی پاکستانی ٹیم میں واپسی پر کسی کو بھی اعتراض کا حق حاصل نہیں جبکہ سابق  بیٹسمین رمیز راجہ نے کہا ہے کہ  پی سی بی کا فاسٹ بولر کو کھلانے کا فیصلہ دیگر کھلاڑیوں کو ماننا پڑے گا۔ پاکستان سوپر لیگ کے سفیر وسیم اکرم کا خیال ہے کہ محمد عامر کی پاکستانی ٹیم میں شمولیت پرکسی کو اعتراض نہیں ہونا چاہئے کیونکہ وہ اپنے کئے کی سزا مکمل کرچکے ہیں اور آئی سی سی نے بھی ان کو واپسی کی اجازت دے دی ہے لہٰذا کسی کو حق حاصل نہیں کہ وہ پی سی بی کوراہ دکھانے کی کوشش کرے۔ وسیم اکرم نے کہا کہ ساتھی کھلاڑیوں کو یہ حق نہیں کہ وہ پی سی بی کو بتانے کی کوشش کریں اور محمد عامرکو کیمپ میں شامل کرنے پر کسی کو اعتراض نہیں ہوناچاہئے کیونکہ اس بات کا اختیار صرف پاکستان کرکٹ بورڈ کے پاس ہے۔ انہوں نے واضح کیا کہ محمد عامر کی شمولیت پر محمد حفیظ اور اظہرعلی کے اعتراض کا کوئی جواز نہیں تھا۔

TOPPOPULARRECENT