Thursday , December 13 2018

محمد عبدالقدیر کی صحت کی بنیاد پر رہائی کیلئے مساعی

میڈیکل بورڈ سے رجوع کرنے چرلہ پلی جیل سپرنٹنڈنٹ سے نمائندگی

میڈیکل بورڈ سے رجوع کرنے چرلہ پلی جیل سپرنٹنڈنٹ سے نمائندگی
حیدرآباد۔ 22 ۔ ا پریل (سیاست نیوز) چرلہ پلی جیل میں محروس محمد عبدالقدیر کی رہائی کیلئے مساعی جاری ہے۔ ان کی اہلیہ محترمہ صابرہ بیگم نے سپرنٹنڈنٹ چرلہ پلی جیل کو مکتوب لکھ کر اپنے شوہر کی طبی بنیاد پر رہائی کو یقینی بنانے کیلئے جی او ایم ایس نمبر 44 مورخہ 16 مارچ 2007 ء کے رہنمایانہ خطوط کے مطابق اس کیس کو میڈیکل بورڈ سے رجوع کرنے کی خواہش کی ہے۔ محمد عبدالقدیر سی ٹی نمبر 5624 کی رہائی کو حکومت کی تبدیل شدہ پالیسی فیصلہ کی روشنی میں یقینی بنایا جاسکتا ہے۔ حکومت کی پالیسی کے مطابق عمر قید کی سزا کاٹنے والے قیدی کا چال چلن بہتر ہو یا وہ طبی طور پر رہائی کے بعد کسی امکانی جرم کے ارتکاب کے اہل نہ ہوں تو اسے رہا کیا جاسکتا ہے ۔ ایسے قیدی کا میڈیکل بورڈ کے ذریعہ طبی معائنہ کروایا جائے تاکہ عمر قید کی سزا پوری ہونے کے باوجود محروس رہنے والے قیدی کو ان کی صحت کی بنیاد پر رہا کیا جاسکے۔ جسٹس این رام موہن راؤ کی عدالت میں داخل کردہ رٹ درخواست نمبر 8348 کے 2014 کے احکام کی ایک کاپی محترمہ صابرہ بیگم نے سپرنٹنڈنٹ چرلہ پلی جیل کو پیش کرتے ہوئے ان کے شوہر کا میڈیکل بورڈ سے طبی معائنہ کروانے کی خواہش کی ہے۔میڈیکل بورڈ ریاستی حکومت کے پالیسی فیصلہ کے مطابقت میں عبدالقدیر کے کیس پر غور کرتے ہوئے ان کی صحت کی بنیاد پر رہائی کی سفارش کرسکتا ہے۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT