Thursday , January 17 2019

محمد محمود علی کو وزیر داخلہ کا قلمدان

آج مکہ مسجد میں نماز جمعہ اور شکرانہ ادا کریں گے
واحد وزیر کی شمولیت مسلم دوستی کا ثبوت، دیگر ریاستوں کیلئے مثال
حیدرآباد۔ 13 ڈسمبر (سیاست نیوز) ریاستی وزیر محمد محمود علی کل نماز جمعہ تاریخی مکہ مسجد میں ادا کریں گے۔ چیف منسٹر کی حیثیت سے دوسری مرتبہ حلف لینے والے کے چندر شیکھر راؤ نے اپنی سابق کابینہ میں ڈپٹی چیف منسٹر اور وزیر مال رہنے والے محمد محمود علی کو وزیر داخلہ کا قلمدان تفویض کیا ہے۔ چیف منسٹر کے دفتر نے آج رات یہ اعلان کیا۔ سابق کابینہ میں وزارت داخلہ کا قلمدان نائنی نرسمہا ریڈی کے پاس تھا۔ محمد محمود علی ریاست میں ٹی آر ایس حکومت کی دوبارہ کامیابی اور انہیں کابینہ میں شمولیت پر نماز شکرانہ بھی ادا کریں گے۔ ٹی آر ایس کے قائدین اور کارکنوں سے اس موقع پر بڑی تعداد میں شرکت کی اپیل کی گئی ہے تاکہ تلنگانہ میں کے سی آر حکومت کے حق میں دعا کی جاسکے۔ حلف برداری کے بعد میڈیا کے نمائندوں سے بات چیت کرتے ہوئے محمد محمود علی نے کہا کہ چیف منسٹر نے ان پر مکمل اعتماد کرتے ہوئے دوبارہ کابینہ میں شامل کیا ہے۔ چیف منسٹر کے ہمراہ صرف ایک مسلم وزیر کو حلف دلانا کے سی آر کی مسلم دوستی کا واضح ثبوت ہے۔ ایسے وقت جبکہ ملک میں مسلمانوں کے ساتھ تعصب کا برتائو کیا جارہا ہے، کے سی آر نے ایک مسلمان کو اپنے ساتھ حلف دلاکر ملک بھر کے لیے مثال قائم کی ہے۔ محمود علی نے کہا کہ کے سی آر نے مسلمانوں کے احترام اور انہیں حکومت میں اونچا مقام دینے کی جو مثال قائم کی ہے وہ یقیناً ایک تاریخی قدم ہے۔

متحدہ آندھراپردیش اور ملک کی کسی بھی ریاست میں اس طرح کی مثال نہیں مل سکتی۔ انہوں نے کہا کہ اسمبلی انتخابات میں مسلمانوں نے اس طرح ٹی آر ایس کی تائید کی اس کے جواب میں کے سی آر نے خیرسگالی کا مظاہرہ کرتے ہوئے صرف ایک مسلم وزیر کو اپنے ساتھ حلف دلاتے ہوئے یہ پیام دیا کہ وہ حقیقی معنوں میں سکیولر قائد ہیں۔ انہوں نے چیف منسٹر سے اظہار تشکر کیا اور کہا کہ جو بھی قلمدان دیا جائے گا وہ پوری ایمانداری اور دیانتداری کے ساتھ فرائض انجام دیں گے۔ انہوں نے کہا کہ ملک میں پہلی مرتبہ کے سی آر نے ایک مسلمان کو ڈپٹی چیف منسٹر کے عہدے پر فائز کیا تھا اور دوسری میعاد میں دوبارہ مسلمان کو پہلے وزیر کی حیثیت سے حلف دلانا یقیناً مثالی قدم ہے۔ انہوں نے کہا کہ گزشتہ چار برسوں میں حکومت کی شاندار کارکردگی کے نتیجہ میں عوام نے شاندار کامیابی سے نوازا۔ انہوں نے کہا کہ چیف منسٹر نے انتخابی منشور میں اقلیتوں سے کیے گئے وعدوں کی تکمیل کے علاوہ کئی نئی اسکیمات کا آغاز کیا ہے۔ دوسری میعاد میں کے سی آر اقلیتوں کے لیے ترقی کا جامع منصوبہ رکھتے ہیں۔ انہوں نے اقلیتی رائے دہندوں اور مسلم جماعتوں اور تنظیموں سے اظہار تشکر کیا جنہوں نے انتخابات میں ٹی آر ایس کی بھرپور تائید کی۔ محمود علی نے کہا کہ چیف منسٹر کو اس بات کا احساس ہے کہ اقلیتوں کی مکمل تائید سے حکومت دوبارہ برسراقتدار آئی ہے۔ محمود علی نے مسلمانوں کو یقین دلایا کہ ٹی آر ایس حکومت کی دوسری میعاد اقلیتوں کی ترقی کے نئے دور کا آغاز ثابت ہوگی۔ انہوں نے مسلم قائدین، علماء مشائخین، دانشوروں اور عمائدین سے اظہار تشکر کیا جنہوں نے ٹی آر ایس کی تائید کی تھی۔ ملک اور بیرون ملک سے محمود علی کو کابینہ میں شمولیت پر مبارکباد کے پیامات موصول ہورہے ہیں۔ واضح رہے کہ اس مرتبہ کابینہ کے واحد وزیر محمود علی کو وزیر داخلہ کا اہم قلمدان الاٹ کیا گیا۔ سابق میں نواب میر احمد علی خاں اور ایم ایم ہاشم وزیر داخلہ رہ چکے ہیں۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT