Saturday , November 18 2017
Home / شہر کی خبریں / محکمہ اقلیتی بہبود سے ادبی و تہذیبی پروگرام

محکمہ اقلیتی بہبود سے ادبی و تہذیبی پروگرام

عثمانیہ یونیورسٹی کی صدی تقاریب کے ضمن 22 اور 23 مئی کو سمینار و دیگر تقاریب
حیدرآباد۔ 20مئی (سیاست نیوز) عثمانیہ یونیورسٹی کی صد سالہ تقاریب کے سلسلہ میں محکمہ اقلیتی بہبود اور تلنگانہ اسٹیٹ اردو اکیڈیمی کے اشتراک سے تین روزہ ادبی اور تہذیبی پروگراموں کی تیاریاں مکمل کرلی گئی ہیں۔ 22 اور 23 مئی کو دو روزہ قومی سمینار منعقد ہوگا جس میں جامعہ عثمانیہ کی تاریخ کے علاوہ مشاہرین عثمانیہ کی خدمات کو پیش کیا جائے گا۔ بیگم پیٹ میں واقع دی پلازہ ہوٹل میں قومی سمینار منعقد ہوگا۔ ڈپٹی چیف منسٹر محمد محمود علی 22 مئی کو 10:30 بجے دن قومی سمینار کی افتتاحی تقریب کی صدارت کریں گے۔ حکومت کے مشیر برائے اقلیتی امور اے کے خان، سکریٹری اقلیتی بہبود سید عمر جلیل، سابق وائس چانسلر عثمانیہ یونیورسٹی پروفیسر سلیمان صدیقی اور آصف سابع نواب میر عثمان علی خان کے فرزند نواب فضل جاہ بہادر مہمانان خصوصی ہوں گے۔ پروفیسر انور معظم سابق صدر شعبہ اسلامک اسٹیڈیز عثمانیہ یونیورسٹی کلیدی خطبہ دیں گے۔ سمینار و دیگر پروگراموں کے کنوینر ڈائرکٹر سکریٹری اردو اکیڈیمی پروفیسر ایس اے شکور ہوں گے۔ سمینار کی اختتامی تقریب 23 مئی کو سہ پہر 3 بجے منعقد ہوگی مشیر اقلیتی امور اے کے خان صدارت کریں گے۔ سکریٹری اقلیتی امور سید عمر جلیل، نواب نجف علی خان، پروفیسر بیگ احساس اور ڈاکٹر معید جاوید مہمانان خصوصی ہوں گے۔ قومی سمینار کے لیے مختلف موضوعات کو قطعیت دی گئی ہے۔ پہلے اجلاس کے لیے جن موضوعات کو منتخب کیا گیا وہ ریاست حیدرآباد کی لسانی صورتحال اور جامعہ عثمانیہ کا پس منظر ہیں۔ دوسرے اجلاس میں جامعہ عثمانیہ کا قیام، جامعاتی سطح پر اردو ذریعہ تعلیم کا تجربہ اور انگریزی زبان اور جامعہ عثمانیہ کی تہذیبی روایت جیسے موضوعات پر مقالے پیش کیئے جائیں گے۔ 23 مئی کو پہلے اجلاس کے موضوعات درالترجمہ کا قیام مراحل و اسالیب، وضع اصطلاحات ناموران جامعہ عثمانیہ ہوں گے۔ چوتھے اور آخری اجلاس کے موضوعات تعلیم کا بدلتا ہوا منظر نامہ، جامعہ عثمانیہ کی موجودہ صورتحال مسائل و تجاویز اور نواب میر عثمان علی خان آصف سابع کا تصور تعلیم ہوں گے۔ 25 مئی کو تلگو للتاکلا تھورنم باغ عامہ نام پلی میں شام 7 تا 11 بجے شب شام غزل کا اہتمام کیا جائے گا۔ عالمی شہرت یافتہ گلوکار پنکج ادھاس اپنے فن کا جادو جائیں گے۔ ان کے علاوہ مقامی فنکار بھی غزلیات پیش کریں گے۔ اس پروگرام میں عوام کے لیے داخلہ مفت رہے گا۔ پروفیسر ایس اے شکور نے محبان اردو عثمانین برادری اور اہل ذوق افراد سے تین روزہ پروگراموں کو کامیاب بنانے کی ا پیل کی ہے۔

TOPPOPULARRECENT