Tuesday , September 25 2018
Home / شہر کی خبریں / محکمہ اقلیتی بہبود میں تقررات کیلئے ریٹائرڈ عہدیدار بھی کوشاں

محکمہ اقلیتی بہبود میں تقررات کیلئے ریٹائرڈ عہدیدار بھی کوشاں

سیاسی قائدین اور وزراء کے سفارشی خطوط کے ساتھ چیف منسٹر کے دفتر سے رجوع

سیاسی قائدین اور وزراء کے سفارشی خطوط کے ساتھ چیف منسٹر کے دفتر سے رجوع
حیدرآباد۔/7اپریل، ( سیاست نیوز) حکومت کے نامزد عہدوں پر تقررات کیلئے ایک طرف برسراقتدار پارٹی کے قائدین سرگرداں ہیں تو دوسری طرف بعض ریٹائرڈ عہدیدار دوبارہ سرکاری عہدوں پر کسی نہ کسی طرح فائز ہونے کی کوشش کررہے ہیں۔ چیف منسٹر کے دفتر کے ذرائع نے بتایا کہ حالیہ عرصہ میں مختلف محکمہ جات اور خاص طور پر محکمہ اقلیتی بہبود میں اہم عہدوں سے سبکدوش ہونے والے کئی عہدیدار مختلف وزراء اور سیاسی قائدین کی سفارشات کے ساتھ چیف منسٹر کے دفتر رجوع ہورہے ہیں تاکہ انہیں اقلیتی بہبود کے مختلف اداروں میں فائز کیا جاسکے۔ بتایا جاتا ہے کہ محکمہ کے بعض اعلیٰ عہدیداروں کی بھی ان افراد کو تائید حاصل ہے۔ ان ریٹائرڈ عہدیداروں کی خواہش ہے کہ حکومت تقررات سے متعلق شرائط میں نرمی کرتے ہوئے اقلیتی اداروں میں انہیں خدمت کا موقع دے۔ مختلف وزراء اور سیاسی قائدین کے سفارشی خطوط کے ساتھ ان کے بائیو ڈاٹا چیف منسٹر کے دفتر میں پائے گئے اور چیف منسٹر نے ابھی تک اس جانب کوئی توجہ نہیں کی۔ بتایا جاتا ہے کہ محکمہ اقلیتی بہبود میں آفیسر آن اسپیشل ڈیوٹی، منیجنگ ڈائرکٹر اقلیتی فینانس کارپوریشن، اسپیشل آفیسر حج کمیٹی اور وقف بورڈ میں کئی عہدوں کیلئے ریٹائرڈ عہدیداروں کی زبردست دوڑ دھوپ دیکھی جارہی ہے۔حکومت اگرچہ ریٹائرڈ عہدیداروں کو دوبارہ بازمامور کرنے کے سلسلہ میں ذہنی طور پر تیار نہیں لیکن عہدیدار اپنی مساعی جاری رکھے ہوئے ہیں۔ اقلیتی بہبود اور اس کے تحت اداروں میں اہم عہدوں پر موزوں عہدیداروں کی کمی کا فائدہ اٹھاتے ہوئے ریٹائرڈ عہدیدار اپنے لئے بہتر عہدے اور مواقع تلاش کررہے ہیں۔ بتایا جاتا ہے کہ حالیہ عرصہ میں اقلیتی فینانس کارپوریشن سے ریٹائرڈ ہونے والے ایک اعلیٰ عہدیدار کی فائیل چیف منسٹر کے پاس محکمہ کی جانب سے روانہ کی گئی لیکن چیف منسٹر نے یہ کہتے ہوئے فائیل اپنے سکریٹری کے حوالے کردی کہ اس کا بعد میں جائزہ لیا جائے گا۔ بتایا جاتا ہے کہ چیف منسٹر چاہتے ہیں کہ دیگر محکمہ جات میں موجود اقلیتی عہدیداروں یا پھر غیر اقلیتی عہدیداروں کی خدمات حاصل کرتے ہوئے اقلیتی بہبود میں فائز کیا جائے۔ وہ نامزد عہدوں پر پارٹی قائدین کے تقررات کا عمل جلد شروع کرنے کے حق میں ہیں۔ دیکھنا یہ ہے کہ پارٹی قائدین اور ریٹائرڈ عہدیداروں میں کامیابی کس کے ہاتھ لگے گی۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT