Saturday , November 18 2017
Home / شہر کی خبریں / محکمہ پولیس میں 18,290 نئی جائیدادوں کی منظوری آئندہ پانچ سال میں تقررات

محکمہ پولیس میں 18,290 نئی جائیدادوں کی منظوری آئندہ پانچ سال میں تقررات

حیدرآباد۔23جولائی (سیاست نیوز) ریاستی حکومت نے محکمہ پولیس میں 18ہزار 290نئی جائیدادوں کو منظوری دی ہے تاکہ ریاست میں محکمہ پولیس کو مزید مستحکم کیا جاسکے۔ محکمہ پولیس کو نئی جائیدادوں کی منظوری کے سلسلہ میں جاری کردہ جی او 121کے مطابق ریاست میں آئندہ 5برسوں کے دوران محکمہ پولیس کیلئے منظورہ ان 18ہزار 290جائیدادوںپر تقررات عمل میںلائے جائیں گے۔احکامات کے مطابق نئے اضلاع کی تشکیل اور نئے کمشنریٹس کے قیام کے بعد محکمہ داخلہ کی جانب سے موصول سفارشات کے بعد کئے گئے ان اقدمات کے تحت نئی جائیدادوں کی منظوری عمل میںلائی گئی ہے جس پر اندرون 5سال تقررات عمل میںلائے جائیں گے۔حکومت تلنگانہ کے محکمہ داخلہ کی جانب سے جاری کردہ جی او کے مطابق حکومت نے 9ہزار 629سیول جائیدادوں کو منظوری فراہم کی ہے جبکہ 5 ہزار 738آرمڈ ریزرو فورس کی نئی جائیدادوں کو منظوری دی گئی ہے ۔ اسی طرح اسپیشل پولیس میں 2ہزار 75جائیدادوں کی منظوری دی گئی ہے اور کمیونیکیشن میں 143جائیدادوں کو منظوری دی گئی ہے۔ وزارتی عملہ میں 599 جائیدادوں کو منظوری دی گئی ہے ۔ الائیڈ پولیس ونگ میں 106 جائیدادوں کو منظوری فراہم کی گئی ہے۔حکومت نے محکمہ داخلہ کو اس بات کی بھی ہدایت دی کہ وہ ان جائیدادوں پر مرحلہ وار انداز میں بھرتی کے اقدامات کرے اور تمام تقررات سے قبل وزارت فینانس سے مشاورت کو ممکن بنانے کے اقدامات کئے جائیں تاکہ آئندہ 5 برسوں میں ان جائیدادوں پر تقررات کا عمل مکمل کیا جاسکے۔ بتایاجاتاہے کہ ریاست تلنگانہ میں اضلاع کی از سر نو حد بندی اور نئے کمشنریٹس کے قیام کے علاوہ محکمہ پولیس کو عصری بنانے کے عمل کے سلسلہ میں کئے جانے والے اقدامات کے تحت ان نئی جائیدادوں کو منظوری فراہم کی گئی ہے اور محکمہ پولیس کے مختلف شعبہ جات میں نئی جائیدادوں پر تقررات سے نوجوانوں کو کافی فائدہ حاصل ہونے کے امکانات ہوں گے کیونکہ نئی جائیدادوں کی منظوری سے ریاست کی جانب سے فراہم کی جانیو الی ملازمتو ںمیں اضافہ ہوگا۔محکمہ داخلہ کا کہنا ہے کہ ریاستی حکومت پولیس کو عصری بنانے کے علاوہ نئے اضلاع میں امن و امان کی برقراری کیلئے درکار عملہ کی تفصیلات اکٹھا کرنے کے بعد ہی حکومت کو نئی جائیدادوں کو منظوری فراہم کرنے کی سفارش کی تھی جسے حکومت تلنگانہ کی جانب سے قبول کرتے ہوئے احکامات کی اجرائی عمل میںآئی۔

 

TOPPOPULARRECENT