Tuesday , January 23 2018
Home / شہر کی خبریں / مختلف شعبہ حیات میں تیز رفتار ترقی، حسن نوریان کی پریس کانفرنس

مختلف شعبہ حیات میں تیز رفتار ترقی، حسن نوریان کی پریس کانفرنس

حیدرآباد۔/8فبروری، ( سیاست نیوز) قونصل جنرل ایران متعینہ حیدرآبا جناب حسن نوریان نے کہا کہ ایران میں حسن روحانی کی زیر قیادت حکومت اعتدال پسند ہے اور ان کے اقتدار سنبھالنے کے بعد سے ایران مختلف شعبوں میں تیز رفتار ترقی کی سمت گامزن ہے۔ ایران میں اسلامی انقلاب کی 35ویں سالگرہ کے موقع پر پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے حسن نوریان نے کہا

حیدرآباد۔/8فبروری، ( سیاست نیوز) قونصل جنرل ایران متعینہ حیدرآبا جناب حسن نوریان نے کہا کہ ایران میں حسن روحانی کی زیر قیادت حکومت اعتدال پسند ہے اور ان کے اقتدار سنبھالنے کے بعد سے ایران مختلف شعبوں میں تیز رفتار ترقی کی سمت گامزن ہے۔ ایران میں اسلامی انقلاب کی 35ویں سالگرہ کے موقع پر پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے حسن نوریان نے کہا کہ احمدی نژاد نے ایران کے نیو کلیر مسئلہ پر مغربی دنیا کے دباؤ کو ہرگز قبول نہیں کیا تاہم حسن روحانی کے برسراقتدار آنے کے بعد مغربی طاقتوں کو بھی اس بات کا احساس ہونے لگا کہ یورینیم افزودگی ایران کا حق ہے اور اس سے محروم نہیں کیا جاسکتا۔ ایرانی قونصلیٹ نے احمدی نژاد کی حکومت کو کٹر پسند ہونے سے متعلق سوال کو یہ کہتے ہوئے ٹال دیا کہ حکمراں کوئی ہو ایران کی پالیسی میں کوئی تبدیلی کی گنجائش نہیں۔ انہوں نے کہا کہ خلائی سائنس، آئٹمک اور نیوکلیر سائنس، ڈیفنس، سٹیلائیٹ لانچنگ اور ڈرون طیاروں کا اضافہ جیسے اہم شعبوں میں ایران نے عظیم کامیابی حاصل کی ہے۔صحت سے متعلق شعبہ میں بھی ایران نے کافی ترقی کی۔ انہوں نے کہا کہ مغربی طاقتوں کی جانب سے ایران کو پُرامن نیوکلیر پروگرام سے روکنے کی بارہا کوششوں کے باوجود ایرانی عوام نے اپنی صلاحیتوں کا بھرپور مظاہرہ کیا ہے۔ حسن نوریان نے کہا کہ

ایران کسی بھی ملک کے داخلی معاملات میں مداخلت کے حق میں نہیں۔ اس کا ماننا ہے کہ علاقائی تنازعات مذاکرات اور عوامی جذبات کے احترام کے ذریعہ حل کئے جاسکتے ہیں۔ صدارتی انتخابات میں حسن روحانی کی کامیابی کے بعد ایران نے پڑوسی ممالک بالخصوص ہندوستان کے ساتھ تعلقات کے استحکام پر توجہ دی ہے۔ ہند۔ ایران تعلقات کا ذکر کرتے ہوئے حسن نوریان نے کہاکہ یہ دونوں ایشیاء کی بڑی سیاسی طاقتیں ہیں اور بین الاقوامی سطح پر ان کے رول کو نظرانداز نہیں کیا جاسکتا۔ دونوں ممالک نے ہمیشہ ہی علاقائی اور بین الاقوامی سطح پر باہمی تعاون کی ضرورت کو محسوس کیا ہے۔ سیاسی، ثقافتی اور معاشی شعبوں میں دونوں ممالک کے باہمی تعاون میں اضافہ ہوا ہے۔ پریس کانفرنس میں چیف پبلک ریلیشن آفیسر ایرانی قونصلیٹ علی اکبر نیرومند کے علاوہ دیگر سفارتی عہدیدار موجود تھے۔ بعد میں اسلامی انقلاب کی 35ویں سالگرہ کے موقع پر ایک تقریب منعقد کی گئی جس میں حیدرآباد کی کئی ممتاز شخصیتوں نے شرکت کی۔

TOPPOPULARRECENT