Wednesday , June 20 2018
Home / شہر کی خبریں / مخلوعہ جائیدادوں کو پر کرنے آر کرشنیا کا مطالبہ

مخلوعہ جائیدادوں کو پر کرنے آر کرشنیا کا مطالبہ

شمس آباد ۔ 15 ۔ ڈسمبر (سیاست نیوز) آر کرشنیا ایل بی نگر رکن اسمبلی نے شمس آباد میں کہا کہ کے چندرا شیکھر راؤ نے انتخابی وعدے کئے لیکن جب عمل کا وقت آیا تو وہ پیچھے ہٹ رہے ہیں ۔ ریاست تلنگانہ میں دو لاکھ خالی مخلوعہ جائیدادیں ہیں، اس کی بھرتی کرنے کو کہا گیا تو وہ بے جا بہانے بناتے ہوئے انہیں مسلسل ٹال رہے ہیں۔ اگر ملازمتیں فراہم کردی گئ

شمس آباد ۔ 15 ۔ ڈسمبر (سیاست نیوز) آر کرشنیا ایل بی نگر رکن اسمبلی نے شمس آباد میں کہا کہ کے چندرا شیکھر راؤ نے انتخابی وعدے کئے لیکن جب عمل کا وقت آیا تو وہ پیچھے ہٹ رہے ہیں ۔ ریاست تلنگانہ میں دو لاکھ خالی مخلوعہ جائیدادیں ہیں، اس کی بھرتی کرنے کو کہا گیا تو وہ بے جا بہانے بناتے ہوئے انہیں مسلسل ٹال رہے ہیں۔ اگر ملازمتیں فراہم کردی گئی تو کئی خاندان کو سہارا مل جائے گا لیکن حکومت ان کی تنخواہ پر کروڑ ہا روپئے خرچ کرنے سے ڈر رہے ہیں۔ ریاست تلنگانہ کے لئے 1200 افراد نے جان کی قربانی دی جس کے بعد ہی ریاست علحدہ ہوا۔ انتخابات کے وقت کے سی آر نے گھر گھر کو ملازمت فراہم کرنے کا اعلان کیا تھا لیکن آج تک اس پر کوئی عمل نہیں کیا گیا ۔ گروپ I میں 1200 ، گروپ II میں 3500 اور گروپ IV میں 35,000 سے زائد ملازمتیں مخلوعہ ہیں جبکہ آندھراپردیش میں خالی جائیدادوں کو پر کرنے کیلئے اعلامیہ جاری کردیا گیا ۔ آفسوں میں اسٹاف کی کمی کی وجہ سے کئی کام ٹھپ ہورہے ہیں ۔ ٹیچرس کی بھی کئی جائیدادیں خالی ہیں۔ ٹی آر ایس حکومت سات ہزار اسکولس کو بند کرنے کا منصوبہ رکھتی ہے۔ بے روزگاروں کو اگر ملازمتیں فراہم نہیں کی گئی تو بڑے پیمانہ پر احتجاج کرنے کا انتباہ دیتے ہوئے آر کرشنیا نے کہا کہ بیس لاکھ طلباء کی زندگی اسکالرشپ اور فیس ری ایمبرسمنٹ پر منحصر ہے۔ حکومت کو چاہئے کہ وہ ہر شخص خاص کر طلباء کی بہتری کے اقدامات کرے ورنہ ٹی آر ایس ارکان پارلیمنٹ اور ارکان اسمبلی کو سڑک پر آنے نہیں دیا جائے گا۔ اس موقع پر رمیش یادو ایڈوکیٹ ، کمار یادو ، ستیش زیڈ پی ٹی سی ممبر شمس آباد ، سریکانت یادو ایم پی ٹی سی ممبر کے علاوہ دیگر افراد موجود تھے۔

TOPPOPULARRECENT