Friday , September 21 2018
Home / سیاسیات / مدھیہ پردیش اسمبلی سے کانگریس کا واک آؤٹ

مدھیہ پردیش اسمبلی سے کانگریس کا واک آؤٹ

بھوپال ۔ 24 فبروری۔ ( سیاست ڈاٹ کام ) فیول ٹیکس کے مسئلہ پر مدھیہ پردیش کے وزیر فینانس جینت ملیا کے بیان پر غیرمطمئن اپوزیشن کانگریس نے آج ایوان اسمبلی سے وقفہ صفر کے دوران واک آؤٹ کردیا۔ وقفہ صفر کے دوران کانگریس رکن رام نواس راوت نے حکومت سے دریافت کیا کہ ایندھن ، پٹرول ، ڈیزل اور پکوان گیس کی اصل قیمت کیا ہے ۔ مختلف محاصل عائد کرنے ک

بھوپال ۔ 24 فبروری۔ ( سیاست ڈاٹ کام ) فیول ٹیکس کے مسئلہ پر مدھیہ پردیش کے وزیر فینانس جینت ملیا کے بیان پر غیرمطمئن اپوزیشن کانگریس نے آج ایوان اسمبلی سے وقفہ صفر کے دوران واک آؤٹ کردیا۔ وقفہ صفر کے دوران کانگریس رکن رام نواس راوت نے حکومت سے دریافت کیا کہ ایندھن ، پٹرول ، ڈیزل اور پکوان گیس کی اصل قیمت کیا ہے ۔ مختلف محاصل عائد کرنے کے بعد صارفین کو دستیاب قیمت کیا ہے ۔ انھوں نے کہا کہ پڑوسی ریاستوں کے مقابل مدھیہ پردیش میں پٹرول اور ڈیزل کی قیمت سب سے زیادہ ہے ۔ انھوں نے حکومت سے اصرار کیا کہ غریب عوام کے حق میں ایندھن ٹیکس میں کٹوتی کی جائے تاہم وزیر فینانس نے بتایا کہ فیول پر ٹیکس میں کمی کا کوئی منصوبہ نہیں ہے ۔ انھوں نے یہ ریمارک کیا کہ راوت کا سوال ، استفسار سے زیادہ ایک تقریر کی طرح ہے ۔ انھوں نے راوت کو سمجھنے کی کوشش بھی کی لیکن غیرمطمئن اپوزیشن نے نعرہ بازی کرتے ہوئے ایوان سے واک آوٹ کردیا ۔ بعد ازاں اسمبلی احاطہ میں میڈیا سے بات کرتے ہوئے رام نواس راوت نے کہا کہ ریاست میں ایندھن کی قیمتیں آسمان سے باتیں کررہی ہیں جس کے باعث صارفین پر ناقابل برداشت بوجھ عائد ہورہا ہے ۔ انھوں نے بتایا کہ عالمی مارکٹ میں تیل کی قیمتیں مسلسل گراوٹ کاشکار ہے اور اس کا فائدہ عام آدمی کو پہونچنا چاہئے تھا لیکن حکومت مدھیہ پردیش اس کے برعکس اقدامات کرتے ہوئے فیول ٹیکس میں اندھا دھند اضافہ کردیا ہے جس کے نتیجہ میں اشیائے ضروریہ کی قیمتیں بھی اسمان کو چھو رہی ہیں اور ان میں مسلسل اضافہ ہورہا ہے ۔

TOPPOPULARRECENT