Monday , December 18 2017
Home / ہندوستان / مدھیہ پردیش کے مغرور وزیر کے خلاف کارروائی کی جائے

مدھیہ پردیش کے مغرور وزیر کے خلاف کارروائی کی جائے

کانگریس اور عام آدمی پارٹی کے مطالبہ کو آر ایس ایس کی تائید
بھوپال ۔ 3 ۔ نومبر : ( سیاست ڈاٹ کام) : آر ایس ایس نے آج مدھیہ پردیش کے ایک وزیر کے خلاف کانگریس اور عام آدمی پارٹی کے مطالبہ کی تائید کی ہے جنہوں نے 2 یوم قبل ایک لڑکے کو لات مار کر تنازعہ پیدا کردیا تھا اور کہا کہ وزراء کو عوام کے تئیں انتہائی حساس ہونا چاہئے ۔ میڈیا کے نمائندوں نے جب یہ دریافت کیا کہ حکومت نے ان ( ریاستی وزیر ) کے خلاف کارروائی کیوں نہیں کی ہے ؟ آر ایس ایس علاقہ چھتیس گڑھ کے سربراہ اشوک سوہانی نے کہا کہ وزراء کو عوام کے تئیں بے حد احساس ہونا چاہئے اور حکومت مدھیہ پردیش بھی قصور وار وزیر مہدیلے کے خلاف کارروائی کرے ۔ وزیر افزائش مویشیاں کو ایک ویڈیو کلپنگ میں ایک لڑکے کو ٹھوکر مارتے ہوئے دیکھا گیا جس پر زبردست تنازعہ اُٹھ کھڑا ہوگیا ۔ یہ واقعہ یوم تاسیس مدھیہ پردیش کی ایک تقریب کے موقع پر پیش آیا تھا ۔ سینئیر کانگریس لیڈر منیش تیواری نے مطالبہ کیا کہ مہدیلے کو کابینہ سے برطرف کردیا جائے ۔ جب کہ عام آدمی پارٹی نے بھی ریاستی وزیر سے استعفیٰ کا مطالبہ کرتے ہوئے مدھیہ پردیش حقوق انسانی کمیشن سے ان کے خلاف سخت کارروائی کے لیے درخواست کی ہے ۔ اس واقعہ کے ایک دن بعد مہدیلے نے یہ ادعا کیا کہ نیوز چیانل پر پیش کردہ ویڈیو بناوٹی ہے ۔ انہوں نے بتایا کہ ایک تقریب کے اختتام کے بعد جب وہ اپنی کار کی سمت جارہی تھی کہ ایک رپورٹر اپنے کیمرہ مین کے ساتھ انٹرویو لے رہا تھا دریں اثناء کوئی آکر میرے پیروں پر گر گیا میں نے اس کا چہرہ بھی نہیں دیکھا اور آگے بڑھ گئی اس کے سواء کچھ بھی نہیں ہوا ۔ لیکن نیوز چیانلس اس واقعہ کو توڑ موڑ کر پیش کررہے ہیں ۔ جس میں کوئی سچائی نہیں ہے ۔ انہوں نے یہ دعویٰ کیا کہ یہ لڑکا حالت نشہ میں تھا اور توازن کھو کر گرپڑا ہوگا ۔۔

TOPPOPULARRECENT