Friday , November 24 2017
Home / دنیا / مذہبی تعصب ہندوستان کیلئے سنگین چیلنج

مذہبی تعصب ہندوستان کیلئے سنگین چیلنج

امریکہ کیساتھ معاشی تعلقات سے بھرپور استفادہ پر زور : بسوال
واشنگٹن۔ 11 مئی (سیاست ڈاٹ کام) امریکہ کی ایک سرکردہ سفارت کار نے آج کہا کہ صحت و توانائی کے شعبوں میں ہند۔ امریکی اقتصادی تعلقات کے موقعوں سے بھرپور استفادہ کیلئے جنسی، مذہبی اور ذات پات کے امتیاز و تعصب جیسے خطرناک چیلنجس سے نمٹنے کی ضرورت ہے۔ نائب وزیر خارجہ برائے جنوبی و وسطی ایشیا نیشا دیسائی بسوال نے کانگریس کی سماعت کے دوران قانون سازوں سے کہا کہ امریکہ چاہتا ہے کہ ہندوستان کے ساتھ تجارت کو ہمہ جہت ترقی دی جائے اور اس سطح کو امریکہ ۔ چین تجارت کے قریب تک پہنچایا جائے۔ بسوال نے مزید کہا کہ ’’امریکی کمپنیوں نے ہندوستان میں تاحال 30 ارب امریکی ڈالر کی سرمایہ کاری کی ہے۔ گزشتہ پندرہ سال کے دوران باہمی تجارت پانچ گنا اضافہ کے ساتھ 100 ارب امریکی ڈالرس تک پہنچ چکی ہے۔ ہندوستانی معیشت اور متوسط طبقہ کی آمدنی میں اضافہ ہورہا ہے۔ ہم چاہتے ہیں کہ اس تعداد میں پانچ گنا اضافہ ہوسکے۔ اس کے بعد ہی ہندوستان کے ساتھ ہماری تجارت چین کے ساتھ امریکی تجارت کی سطح پر پہنچ سکتی ہے‘‘۔ امریکی ایوان نمائندگان کی اُمور خارجہ کمیٹی کے زیراہتمام منعقدہ سماعت میں بسوال نے مزید کہا کہ توانائی، تعلیم، صحت، آب رسانی اور صحت و صفائی جیسے شعبوں کی ترقی کیلئے موجود موقعوں کا بھرپور فائدہ اٹھایا جائے لیکن اس کے لئے صنفی، مذہبی اور ذات پات کے امتیاز و تعصب اور تشدد سے نمٹنا ضروری ہے۔

TOPPOPULARRECENT