Thursday , August 16 2018
Home / Top Stories / مذہب کی بنیاد پر کسی کیخلاف امتیاز نہیں

مذہب کی بنیاد پر کسی کیخلاف امتیاز نہیں

اس طرح کی سوچ کو فروغ دینے کی ہرگز اجازت نہیں :راجناتھ سنگھ
نئی دہلی ۔ 22 مئی ۔( سیاست ڈاٹ کام ) مرکزی وزیر داخلہ راجناتھ سنگھ نے آج کہا کہ ہندوستان میں مذہب یا ذات پات کی بنیاد پر کسی کے خلاف کوئی امتیاز نہیں برتا جاتا اور نہ ہی اس طرح کی سونچ کو فروغ دینے کی اجازت ہے ۔ ان کا یہ بیان دہلی کے آرچ بشپ کے اس تبصرے کے تناظر میں پیش آیا کہ ملک میں انتشارپسندانہ سیاسی فضاء پائی جاتی ہے ۔ انھوں نے 2019ء عام انتخابات سے قبل مہم چلانے کی اپیل کی ہے ۔ آرچ بشپ کے اس بیان پر تبصرہ کرتے ہوئے راجناتھ سنگھ نے کہا کہ میں نے یہ بیان نہیں دیکھا ہے لیکن میں یہ ضرور کہوں گا کہ ہندوستان ایک ایسا ملک ہے جہاں پر کسی کے خلاف ذات پات یا مذہب کی بنیاد پر امتیاز نہیں برتا جاتا اور نہ ہی اس طرح کی سونچ کوآگے بڑھانے کی اجازت ہے ۔ بارڈر سکیورٹی فورس کی تقریب کے موقع پر راجناتھ سنگھ نے کہا کہ بعض اوقات ہم سے ایسے سوالات کئے جاتے ہیں جس پر ہم کوئی سمجھوتہ نہیں کرسکتے ۔ ہم اس ملک کی یکجہتی اور مقتدراعلیٰ پر کسی قسم کاسمجھوتہ کرنا نہیں چاہتے ، یہی ہماری طاقت ہے اور ہمارے سماج میں باہمی اتحاد بھائی چارہ ہی ہماری شناخت ہے ۔

TOPPOPULARRECENT