Monday , June 25 2018
Home / ہندوستان / مراٹھا تحفظات : سپریم کورٹ سے رجوع ہونے فرنویس حکومت کا فیصلہ

مراٹھا تحفظات : سپریم کورٹ سے رجوع ہونے فرنویس حکومت کا فیصلہ

ممبئی۔ 15 نومبر (سیاست ڈاٹ کام) حکومت مہاراشٹرا نے ریاست میں پبلک سرویس اور تعلیمی اداروں میں مراٹھا طبقہ کو 16 فیصد تحفظات پر بامبے ہائیکورٹ کے حکم التواء کے خلاف سپریم کورٹ سے رجوع ہونے کا فیصلہ کیا ہے۔ یہ فیصلہ چیف منسٹر دیویندر فرنویس کی زیرصدارت کُل جماعتی اجلاس میں کیا گیا۔ اجلاس کے بعد شیو سنگرام لیڈر ونائیک میٹے نے ذرائع ابلا

ممبئی۔ 15 نومبر (سیاست ڈاٹ کام) حکومت مہاراشٹرا نے ریاست میں پبلک سرویس اور تعلیمی اداروں میں مراٹھا طبقہ کو 16 فیصد تحفظات پر بامبے ہائیکورٹ کے حکم التواء کے خلاف سپریم کورٹ سے رجوع ہونے کا فیصلہ کیا ہے۔ یہ فیصلہ چیف منسٹر دیویندر فرنویس کی زیرصدارت کُل جماعتی اجلاس میں کیا گیا۔ اجلاس کے بعد شیو سنگرام لیڈر ونائیک میٹے نے ذرائع ابلاغ کے نمائندوں کو بتایا کہ ریاستی حکومت نے ہائیکورٹ کی عبوری رولنگ کے خلاف سپریم کورٹ سے رجوع ہونے کی یقین دہانی کرائی ہے۔ انہوں نے کہا کہ ریاست میں بی جے پی حکومت مراٹھا اور مسلمانوں کا ساتھ دے گی۔ کانگریس کے سابق وزیر نسیم خاں نے جو اجلاس میں شریک تھے ، کہا کہ حکومت مراٹھا اور مسلمانوں کو تحفظات کے مسئلہ پر کُل جماعتی کمیٹی تشکیل دے گی۔ فرنویس نے بھی کل کہا تھا کہ مراٹھا کوٹہ کو حکومت کی مکمل تائید حاصل رہے گی۔

TOPPOPULARRECENT