Tuesday , August 14 2018
Home / شہر کی خبریں / مرکزکا رویہ کسان مخالف ‘ کانگریس مگرمچھ کے آنسو بہا رہی ہے

مرکزکا رویہ کسان مخالف ‘ کانگریس مگرمچھ کے آنسو بہا رہی ہے

تور دال کی خریدی پر تحدیدات کی مذمت ۔ ریاستی وزرا ہریش راؤ اور پوچارم سرینواس ریڈی کا بیان
حیدرآباد 13 مارچ (سیاست نیوز)ریاستی وزراء ہریش راؤ اور پوچارام سرینواس ریڈی نے تور دال کی خریدی کے معاملے میں مرکزی حکومت کے رویے پر سخت برہمی کا اظہار کیا۔ لال جوار کے مسئلہ پر مگرمچھ کے آنسو بہانے کا کانگریس پر الزام عائد کیا۔ آج بی آر کے بھون میں تور دال کی خریدی کے مسائل کا جائزہ لیتے ہوئے دونوں وزراء نے مرکز پر مخالف کسان رویہ اپنانے کا الزام عائد کیا اور کہاکہ مرکزی وزیر سیول سپلائز رام ولاس پاسوان کو اس سلسلہ میں مکتوب روانہ کرنے کے باوجود کوئی ردعمل کا اظہار نہ ہونے پر ناراضگی ظاہر کی ۔ دونوں وزرانے مرکز کو اپنا رویہ تبدیل کرکے کسانوں کے مفادات کا تحفظ کرنے پر زور دیا۔ انھوں نے کہاکہ ابھی تک 1.70 لاکھ میٹرک ٹن تور دال خریدنے کے باوجود 1.50 لاکھ میٹرک ٹن تور مارکٹ کو پہونچ رہی ہے۔ مرکزی حکومت نے صرف 75 ہزار میٹرک ٹن تور دال خریدنے سے اتفاق کیا ہے۔ تور دال کی خریدی میں مرکزی حکومت کی جانب سے تحدیدات پر ہریش راؤ اور سرینواس ریڈی نے ناراضگی ظاہر کی ہے۔ 15 فروری کو دہلی پہونچ کر ایک مرتبہ پھر مرکزی حکومت پر دباؤ بنانے کا ہریش راؤ نے فیصلہ کیا ہے۔ کسانوں کے بقایا جات کی ادائیگی کیلئے حکومت کی جانب سے 600 کروڑ روپئے کی بینک گیارنٹی فراہم کرنے پر دونوں وزراء نے چیف منسٹر کے سی آر سے اظہار تشکر کیا ہے۔ دونوں نے کہاکہ زرعی شعبہ کی ترقی اور کسانوں کی فلاح و بہبود کیلئے ٹی آر ایس حکومت کی اسکیمات سے کانگریس بوکھلاہٹ کا شکار ہے۔ انھوں نے کہاکہ نظام آباد کی رکن پارلیمنٹ کویتا اور ٹی آر ایس ارکان اسمبلی باجی ریڈی گوردھن ریڈی، پرشانت ریڈی نے نظام آباد میں لال جوار کے کسانوں کے مسائل سے چیف منسٹر کو واقف کرایا ہے۔ جس پر حکومت کی جانب سے مسائل کو حل کرنے ہمدردانہ غور کیا جارہا ہے۔ کسانوں کے مسائل پر بات کرنے کا کانگریس قائدین کو اخلاقی حق نہیں ہے۔ لال جوار کسانوں کو پریشان ہونے کی ضرورت نہیں ہے۔ اقل ترین قیمت ادا کرنے حکومت کی جانب سے ہرممکن کوشش کی جائے گی۔ کسانوں کو راحت فراہم کرنے حکومت تمام زاویوں سے جائزہ لے رہی ہے۔ وزراء نے محکمہ مارکٹنگ کے اعلیٰ عہدیداروں کو اس مسئلہ پر ایک رپورٹ پیش کرنے کی ہدایت دی۔

TOPPOPULARRECENT