Saturday , January 20 2018
Home / ہندوستان / مرکزی حکومت کی سزا ء پر دہلی حکومت کی جزاء

مرکزی حکومت کی سزا ء پر دہلی حکومت کی جزاء

نئی دہلی۔/13فبروری، ( سیاست ڈاٹ کام ) ارویند کیجروال کی عام آدمی پارٹی ایک شخص کو محکمہ انسداد رشوت ستانی کا سربراہ نامزد کرنے کا منصوبہ رکھتی ہے جسے حال ہی میں مرکزی حکومت نے دیانتداری کی سزا دی تھی ۔ یہ شخص کوئی اور نہیں بلکہ سنجیو چترویدی ہیں انہیں آل انڈیا انسٹی ٹیوٹ آف میڈیکل سائنسس ہاپسٹل میں ویجلنس چیف کی حیثیت سے ہٹایا گیا تھا

نئی دہلی۔/13فبروری، ( سیاست ڈاٹ کام ) ارویند کیجروال کی عام آدمی پارٹی ایک شخص کو محکمہ انسداد رشوت ستانی کا سربراہ نامزد کرنے کا منصوبہ رکھتی ہے جسے حال ہی میں مرکزی حکومت نے دیانتداری کی سزا دی تھی ۔ یہ شخص کوئی اور نہیں بلکہ سنجیو چترویدی ہیں انہیں آل انڈیا انسٹی ٹیوٹ آف میڈیکل سائنسس ہاپسٹل میں ویجلنس چیف کی حیثیت سے ہٹایا گیا تھا اب وہ دہلی اینٹی کرپشن بیورو کے سربراہ مقرر کئے جائیں گے۔ عام آدمی پارٹی کا الزام ہے کہ مسٹر سنجیو چترویدی کو جو کہ انڈین فاریسٹ آفیسر ہیں ۔ مرکزی حکومت کے زیر انتظام ہاسپٹل میں کرپشن کو بے نقاب کرنے پر سزا دی گئی جبکہ سنجیو چترویدی کا تقرر دہلی میں کرپشن کے خلاف ایک بڑا اقدام تصور کیا جارہا ہے کیونکہ وہ ایک دیانتداراور فرض شناس عہدیدار ہیں اور کرپشن کی سرکوبی کیلئے منظم مہم چلائیں گے۔ گزشتہ سال اگسٹ میں وزارت صحت نے چترویدی کو بحیثیت ویجلنس چیف AIIMS ہٹادیا تھا اور کہا تھا کہ چیف ویجلنس کمیشن نے ان کے تقرر کی منظوری نہیں دی ہے۔ تاہم مسٹر چترویدی نے اپنی دوسالہ میعاد کے دوران ہاسپٹل میں کئی ایک دھاندلیوں کی تحقیقات کی تھی جس میں بعض عہدیداروں کے خلاف کیس درج کئے گئے۔ جنہوں نے بلاوجہ اور غیر قانونی طریقہ سے بیرون ملک کا دورہ کیا تھا جبکہ ایک عہدیدار نے تو حد کردی تھی کہ اپنے پالتو کتے کا AIIMSکے کینسر سنٹر میں آپریشن کروایا تھا۔

TOPPOPULARRECENT