Tuesday , September 25 2018
Home / Top Stories / مرکز اور کجریوال کا محض کھوکھلے وعدوں پر اکتفا ، راہول کا دعویٰ

مرکز اور کجریوال کا محض کھوکھلے وعدوں پر اکتفا ، راہول کا دعویٰ

نئی دہلی ، 17 جون (سیاست ڈاٹ کام) راہول گاندھی نے آج وزیراعظم نریندر مودی اور چیف منسٹر دہلی اروند کجریوال کو نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ تبدیلی محض وعدوں سے نہیں لائی جاسکتی اور الزام عائد کیا کہ غریبوں کو ترقی کے نام پر ان کے حقوق سے محروم کیا جارہا ہے۔ یہاں جنتر منتر پر اپنی تنخواہ کے بقایاجات کی ادائیگی کیلئے احتجاج کرنے والے بلدی ادا

نئی دہلی ، 17 جون (سیاست ڈاٹ کام) راہول گاندھی نے آج وزیراعظم نریندر مودی اور چیف منسٹر دہلی اروند کجریوال کو نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ تبدیلی محض وعدوں سے نہیں لائی جاسکتی اور الزام عائد کیا کہ غریبوں کو ترقی کے نام پر ان کے حقوق سے محروم کیا جارہا ہے۔ یہاں جنتر منتر پر اپنی تنخواہ کے بقایاجات کی ادائیگی کیلئے احتجاج کرنے والے بلدی اداروں کے صفائی کرمچاریوںسے اظہار یگانگت کرتے ہوئے نائب صدر کانگریس نے اُن کے مطالبات کو غریبوں کی ’’عزت نفس‘‘ سے جوڑنے کی کوشش کی اور کہا کہ وہ ان کے ساتھ کسی بھی کاز کیلئے کھڑے ہوں گے تاکہ متحدہ جدوجہد پیش کی جاسکے۔ ’’یہ دہلی کی صفائی کیلئے لڑائی نہیں ہے، یہ اس ملک کی صفائی کیلئے جدوجہد ہے۔ یہ آپ کے عزت نفس کیلئے جدوجہد ہے۔ میں جو کچھ طاقت رکھتا ہوں اسے آپ میں بانٹنا چاہتا ہوں … ہم مل جل کر دکھا دیں گے کہ آپ کی طاقت کیا ہے،‘‘ انھوں نے ان الفاظ کے ساتھ سماج کے مظلوم طبقات کیلئے اپنی بھرپور تائید و حمایت کی پیشکش کی۔ وزیراعظم اور چیف منسٹر دہلی پر تنقید کرتے ہوئے انھوں نے کہا: ’’مودی جی اور کجریوال سوچتے ہیں کہ محض کھوکھلے وعدے کرکے وہ کوئی تبدیلی لاسکتے ہیں۔ صرف وعدے کرتے ہوئے تو کوئی تبدیلی نہیں لائی جاسکتی۔ تبدیلی تو صرف یہاں ٹھہر کر دباؤ ڈالتے ہوئے ہی لاسکتے ہیں۔‘‘ چھ یوم میں دوسری مرتبہ صفائی کرمچاریوں سے خطاب میں راہول نے کہا، ’’آپ سمجھ سکتے ہو کہ میں یہاں صفائی کرمچاریوں کے حق میں لب کشائی کیلئے آیا ہوں۔ یہ تقریریں غریب کسانوں، مزدوروں، صفائی کرمچاریوں اور سارے ملک کے تمام کمزوروں اور مظلوم لوگوں کیلئے ہیں۔‘‘ کمزور طبقات جنھیں پارٹی راغب کرنے کیلئے کوشاں ہے، ان کے حقوق کیلئے لڑنے کا عزم کرتے ہوئے نائب صدر کانگریس نے کہا، ’’میں آپ کے ساتھ کھڑا ہوں، جہاں کہیں آپ چاہیں۔ چاہے ایک روز کیلئے ہو، 10 یوم کیلئے ہو، 50 یوم یا پھر 100 یوم۔‘‘ انھوں نے کہا کہ جہاں کہیں ان کی ضرورت ہو، وہ چھوٹے سے چھوٹے مسئلے کیلئے دستیاب ہیں … چاہے یہ مسئلہ تنخواہ کا ہو، بندھوا مزدور کا ہو یا پھر ان کی عزت نفس۔ قبل ازیں اپنے دورۂ چھتیس گڑھ کے تعلق سے بات کرتے ہوئے جہاں وہ کسانوں اور قبائلیوں کے حقوق کیلئے ’پدیاترا‘ کئے، انھوں نے کہا کہ امیروں نے ترقی کے نام پر موٹی رقمیں کمانے کیلئے غریبوں کی زمینیں چھین لئے، اور انھوں نے انھیں معمولی رقم ادا کی۔
کاہل افراد کیلئے یوگا کی ضرورت :وزیر کرناٹک انجیا
بنگلورو ۔ 17 جون (سیاست ڈاٹ کام) ریاستی حکومت کے موقف سے ہم آہنگ بیان جاری کرتے ہوئے کرناٹک کے سماجی بہبود وزیر انجیا نے آج کہا کہ یوگا کاہل لوگوں کیلئے ہیں، جنہیں ورزش کا وقت نہیں ملتا۔ انہوں نے کہا کہ خاص طور پر ایسے افراد جن کا تعلق خوشحال گھرانے سے ہے، ان کیلئے یوگا ضروری ہے کیونکہ انہیں کھلے میدان میں ورزش کرنے کا وقت نہیں ملتا۔ اس کے برعکس جو لوگ کھیتوں میں کام کرتے ہیں اور پسینہ بہاتے ہیں ، انہیں یوگا کی ضرورت نہیںہے۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT