Tuesday , November 13 2018
Home / Top Stories / مرکز ‘ دلتوں و قبائیلیوں کو کچلتے ہوئے آگ سے نہ کھیلے : کڈیم سری ہری

مرکز ‘ دلتوں و قبائیلیوں کو کچلتے ہوئے آگ سے نہ کھیلے : کڈیم سری ہری

تلنگانہ میں تمام طبقات کو مساوی مواقع فراہم کرنے کا ادعا ۔ ڈپٹی چیف منسٹر کا خطاب
حیدرآباد 8 اپریل ( این ایس ایس ) مرکز کی بی جے پی زیر قیادت این ڈی اے حکومت کے خلاف تنقیدوں میں شدت پیدا کرتے ہوئے تلنگانہ کے ڈپٹی چیف منسٹر کے سری ہری نے آج خبردار کیا کہ اگر وہ ملک میں درج فہرست ذاتوں اور درج فہرست قبائل کو کچلنے کی کوشش کرتے ہوئے آگ سے کھیلے گی تو تباہ ہوجائے گی ۔ انہوں نے دلتوں اور قبائلیوں پر زور دیا کہ وہ آپس میں متحد ہوجائیں کیونکہ یہی وقت ہے کہ ان کے حوق کا تحفظ کرنے کیلئے جدوجہد کی جائے ۔ وزیر فینانس ایٹالہ راجندر ‘ رکن پارلیمنٹ ونود کمار اور دوسروں کے ساتھ کچھ ترقیاتی کاموں میں حصہ لینے کے بعد سری ہری نے ایس سیز ‘ ایس ٹیز انسداد مظالم قانون کیس میں سپریم کورٹ کے فیصلے پر وزیر اعظم نریندر مودی کو تنقید کا نشانہ بنایا ۔ انہوں نے کہا کہ مرکز کی نریندر مودی حکومت کی جانب سے پیش کردہ رپورٹ کی بنیاد پر ہی سپریم کورٹ نے یہ فیصلہ سنایا تھا ۔ ڈپٹی چیف منسٹر نے مزید کہا کہ دستور ہند کے معمار ڈاکٹر بی آر امبیڈکر نے دلتوں اور قبائلیوں کے علاوہ دیگر پچھڑے ہوئے طبقات کے مفادات کے تحفظ کی راہ ہموار کی تھی ۔ سپریم کورٹ اور مرکز کو دستور ہند کی دفعات کے مطابق کام کرنا چاہئے ۔ انہوں نے تاہم کہا کہ موجودہ ایس سی ‘ ایس ٹی انسداد مظالم قانون پر نظر ثانی کرنے کی کسی بھی کوشش سے ملک میں نراج اور بدامنی پیدا ہوگی ۔ انہوں نے کہا کہ مرکز کی بی جے پی حکومت دلتوں کی بھلائی اور بہتری کی مخالف ہے اور ملک میں پچھڑے ہوئے طبقات کیلئے بھی کچھ نہیں کر رہی ہے ۔ انہوں نے الزام عائد کیا کہ مرکزی حکومت ملک میں دلتوں اور قبائلیوں کے ساتھ سوتیلا سلوک کر رہی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ ٹی آر ایس حکومت کی جانب سے تلنگانہ میں دلتوں ‘ قبائلیوں اور اقلیتوں کے حقوق کا تحفظ کیا جا رہا ہے اور انہیں مساوی مواقع فراہم کئے جا رہے ہیں۔ جلد ہی حکومت حیدرآباد میں امبیڈکر کے 125 بلند قامت مجسمے نصب کریگی ۔ انہوں نے کہا کہ چیف منسٹر چندر شیکھر راؤ نے ریاست میں 577 گرو کل ادارے شروع کئے ہیں اور دلتوں اور ایس ٹیز کو 25 لاکھ روپئے اسکالر شپ دی جا رہی ہے ۔

TOPPOPULARRECENT