Tuesday , September 25 2018
Home / سیاسیات / مرکز میں بی جے پی حکومت کی الٹی گنتی شروع

مرکز میں بی جے پی حکومت کی الٹی گنتی شروع

لکھنؤ؍ فیروز پورجھرکہ۔/9اکٹوبر (سیاست ڈاٹ کام) سماج وادی پارٹی نے بی جے پی پر کھوکھلے نعروں اور جھوٹے پروپگنڈہ کی مدد سے مرکز میں اقتدار پر قابض ہونے کا الزام عائد کیا اور کہا کہ یہ پارٹی ضمنی انتخابات میں ہی عوامی تائید سے محروم ہوچکی ہے اور ایسے اشارہ مل رہے ہیں کہ مرکز میں بھی حکومت کی الٹی گنتی شروع ہوگئی ہے۔ سماج وادی پارٹی کے قو

لکھنؤ؍ فیروز پورجھرکہ۔/9اکٹوبر (سیاست ڈاٹ کام) سماج وادی پارٹی نے بی جے پی پر کھوکھلے نعروں اور جھوٹے پروپگنڈہ کی مدد سے مرکز میں اقتدار پر قابض ہونے کا الزام عائد کیا اور کہا کہ یہ پارٹی ضمنی انتخابات میں ہی عوامی تائید سے محروم ہوچکی ہے اور ایسے اشارہ مل رہے ہیں کہ مرکز میں بھی حکومت کی الٹی گنتی شروع ہوگئی ہے۔ سماج وادی پارٹی کے قومی کنونشن نے آج معاشی اور سیاسی قرارداد منظور کی گئی۔ اس میں کہا گیا ہیکہ ریاست میں حالیہ منعقدہ ضمنی انتخابات میں جس طرح بی جے پی کو شکست ہوئی یہ واضح اشارہ ہیکہ مرکز میں بھی اس کی الٹی گنتی شروع ہوچکی ہے۔ بی جے پی نے افراط زر پر قابو، کرپشن، بیروزگاری کے خاتمہ اور کالا دھن اندرون 100 دن واپس لانے کا وعدہ کیا تھا۔

وزیراعظم نریندر مودی پر تنقید کرتے ہوئے پارٹی نے کہا کہ انہوں نے بس انگلیوں کے اشارہ سے تمام مسائل کو حل کردینے کا وعدہ کیا لیکن تمام اہم مسائل کو پس پشت ڈالتے ہوئے امریکہ میں گنگا کی صفائی کی مہم شروع کی۔ وزیر اعظم نریندر مودی پر تنقید جاری رکھتے ہوئے سماج وادی پارٹی نے آج الزام عائد کیا کہ انہیں غریبوں کی کوئی پرواہ نہیں ہے اور وہ صرف سرمایہ داروں پر توجہ مرکوز کئے ہوئے ہیں۔ سماج وادی پارٹی قائد شیوپال سنگھ یادو نے کہا کہ وزیر اعظم کو ملک کے عوام کی خدمت کرنا چاہیئے لیکن موجودہ وزیر اعظم جب امریکہ اور جاپان کے دورہ پر تھے تو انہوں نے تجارت کی باتیں کیں اور وطن واپس آنے کے بعد جھاڑو اٹھالینے کی بات کی۔ وہ پارٹی کے 9ویں قومی کنونشن سے خطاب کررہے تھے۔ انہوں نے کہا کہ وزیراعظم غریبوں سے روزگار چھین لینے کی باتیں کرتے ہیں، اتنا چالاک وزیراعظم ہم نے کبھی نہیں دیکھا تھا جو ہمیشہ جھوٹ بولتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ سماج وادی پارٹی کو ایک مکار اور سرمایہ دار دوست سے چیلنج درپیش ہے۔ ملائم سنگھ یادو نے اپنی افتتاحی تقریر میں چینی در اندازیوں پر خاموشی اختیار کرنے پر حکومت کی سخت مذمت کی اور کہا کہ جو گرجتے ہیں وہ برستے نہیں۔

چین بار بار ہندوستان کی سرحد پار کرکے دراندازی کررہا تھا۔ دونوں ممالک کی سرحد غیر محفوظ ہے اور چین نے ہمیشہ ہندوستان کو دھوکہ دیا ہے۔آخر حکومت چین کے معاملہ پر خاموشی کیوں اختیار کررہی ہے۔ فیروز پور جھرکہ سے موصولہ اطلاع کے بموجب نائب صدر کانگریس راہول گاندھی نے وزیر اعظم نریندر مودی پر الزام عائد کیا کہ وہ صرف چند سرمایہ داروں کیلئے کام کررہے ہیں۔ انہوںنے ادویہ کی قیمتوں پر کنٹرول امریکہ کی چند کمپنیوں کی ایماء پر برخاست کردیا ہے جس کے نتیجہ میں کینسرکی جو دوائیں سابق میں 8ہزار روپئے میں دستیاب تھیں اب ایک لاکھ روپئے میں دستیاب ہیں۔ راہول گاندھی نے ہریانہ کیلئے ایک نیا نعرہ دیا’’ جئے جوان ، جئے کسان، جئے پہلوان‘‘ ان کا یہ نعرہ عالمی سطح کے کئی پہلوانوں کے حوالے سے تھا جو ہریانہ نے ملک کو دیئے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ کانگریس کو فخر ہے کہ اس نے اس ریاست پر حکومت کے دوران اسے ترقی دی ہے۔ انہوں نے بی جے پی کے اس دعوی پر تنقید کی کہ ہریانہ ترقی کے لحاظ سے دیگر ریاستوں سے پیچھے ہے۔ انہوں نے کہا کہ ہریانہ جی ڈی پی اور ملک کی پیداوار کے لحاظ سے ملک بھر میں پہلے مقام پر ہے۔

TOPPOPULARRECENT