Friday , December 15 2017
Home / شہر کی خبریں / مرکز کی ’’ہاؤزنگ فار آل‘‘ اسکیم کیلئے 34 شہروں کا انتخاب

مرکز کی ’’ہاؤزنگ فار آل‘‘ اسکیم کیلئے 34 شہروں کا انتخاب

حکومت تلنگانہ سے تخمینہ رپورٹ پر چھ شہر مستثنیٰ، مرکز کے اقدام پر ناراضگی
حیدرآباد ۔ 12 ستمبر (سیاست نیوز) حکومت تلنگانہ نے مرکزی حکومت کی ’’ہاؤزنگ فار آل‘‘ اسکیم پر عمل آوری کیلئے ریاست کے 34 بڑے شہروں کا انتخاب کرکے مرکز کو تخمینہ رپورٹ روانہ کی تھی جس پر محکمہ شہری ترقیات نے صرف 28 شہروں کو ہی منظوری دی ہے جبکہ مابقی 6 شہروں کو اس اسکیم پر عمل آوری سے مستثنیٰ رکھا ہے اور مذکورہ 6 شہروں کا دوبارہ انتخاب کرکے جدید تخمینہ رپورٹ روانہ کرنے کی ہدایت دی گئی ہے۔ حکومت تلنگانہ کی جانب سے ریاست کے جن 34 شہروں میں غریب عوام کو مکانات کی فراہمی سے متعلق انتخاب کرکے مرکزی حکومت کو تخمینہ رپورٹ روانہ کی گئی تھی ان میں گریٹر حیدرآباد، عادل آباد، اچم پیٹ، آرمور، بھونگیری، بودھن، گجویل، جنگاؤں، کریم نگر، کھمم، محبوب آباد، محبوب نگر، میدک، مٹ پلی، مریال گوڑہ، ناگرکرنول، نرمل، نظام آباد، پالنچہ، سنگاریڈی، سدی پیٹ، سرسلہ، سوریہ پیٹ، وقارآباد، ونپرتی، گریٹرورنگل، ظہیرآباد، نلگنڈہ شامل ہیں ان کو منظوری دے دی گئی ہے جبکہ دباک، حسن آباد جمی کنٹہ، کولاپور، شادنگر، حضورآباد کو مذکورہ اسکیم پر عمل آوری کی اجازت نہیں دی گئی۔ حکومت تلنگانہ کی جانب سے 34 شہروں کا انتخاب کرکے عوام کو مکانات فراہم کرنے سے متعلق روانہ کردہ تخمینہ رپورٹ کے منجملہ صرف 28 شہروں کی ہی منظوری کی اجازت دیتے ہوئے 6 شہروں کا دوبارہ انتخاب کرکے تخمینہ رپورٹ روانہ کرنے سے متعلق مرکزی حکومت کے اقدام پر ریاستی میونسپل عہدیداروں میں تشویش کی لہر دوڑ گئی ہے۔

TOPPOPULARRECENT