Thursday , June 21 2018
Home / ہندوستان / مسئلہ کشمیر سیاسی مستقبل کا مسئلہ: میر واعظ عمر فاروق

مسئلہ کشمیر سیاسی مستقبل کا مسئلہ: میر واعظ عمر فاروق

سری نگر۔ 24؍اگسٹ (سیاست ڈاٹ کام)۔ اعتدال پسند حریت کانفرنس کے صدرنشین میر واعظ عمر فاروق نے کہا کہ مسئلہ کشمیر، ہندوستان اور پاکستان کے درمیان کوئی علاقائی یا سرحدی تنازعہ نہیں بلکہ کشمیریوں کے سیاسی مستقبل کا مسئلہ ہے۔ خونی لکیر ہمارے لئے ناقابل قبول ہے۔ جامع مسجد سری نگر میں ایک اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے انھوں نے کہا کہ جہاں تک جمو

سری نگر۔ 24؍اگسٹ (سیاست ڈاٹ کام)۔ اعتدال پسند حریت کانفرنس کے صدرنشین میر واعظ عمر فاروق نے کہا کہ مسئلہ کشمیر، ہندوستان اور پاکستان کے درمیان کوئی علاقائی یا سرحدی تنازعہ نہیں بلکہ کشمیریوں کے سیاسی مستقبل کا مسئلہ ہے۔ خونی لکیر ہمارے لئے ناقابل قبول ہے۔ جامع مسجد سری نگر میں ایک اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے انھوں نے کہا کہ جہاں تک جموں و کشمیر کے مسئلہ کا تعلق ہے، یہ تو قیادت کے حصول کے لئے ہے، نہ کہ حکومت کے قیام کے لئے۔ یہ مسئلہ جموں و کشمیر کے حدود میں رہنے والے ایک کروڑ 20 لاکھ عوام کے سیاسی مستقبل کا ہے۔ انھوں نے کہا کہ مسئلہ کشمیر کے تعلق سے حریت کانفرنس اور جموں و کشمیر عوامی مجلس عمل کا موقف اور نظریہ بالکل صاف اور واضح ہے کہ جس کشمیر کو خون سے سینچا ہو، وہ کشمیر ہمارا ہے۔ وزیر خارجہ کے مسئلہ کشمیر پر اس بیان پر کہ یہ مسئلہ ہندوستان اور پاکستان کے درمیان دوطرفہ معاملہ ہے، ایک بار پھر سختی کے ساتھ مسترد کرتے ہوئے صدرنشین حریت نے کہا کہ تاریخ اور واقعات اس بات کے شاہد ہیں کہ ماضی میں اب تک دو طرفہ مذاکرات چاہے وہ تاشقند ہو، شملہ ہو، لاہور ہو یا آگرہ، بُری طرح ناکام ہوئے۔ اسی لئے ہمارا یہ اصولی مطالبہ ہے کہ دیرینہ مسئلہ بین الاقوامی اُصولوں کے مطابق حل کیا جائے۔

TOPPOPULARRECENT