Monday , December 18 2017
Home / کھیل کی خبریں / مستقبل میں 10 اوورس کے کرکٹ میچس ممکن

مستقبل میں 10 اوورس کے کرکٹ میچس ممکن

فی الحال کسی کو بھی بہترین کرکٹر کہنا دشوار : کرمانی
حیدرآباد19 ستمبر (سیاست ڈاٹ کام) ہندوستانی کرکٹ ٹیم کے سابق وکٹ کیپر سید کرمانی نے آج کہاکہ بین الاقوامی کرکٹ میں اب 10 اوورس میچ کا آغاز زیادہ دور نہیں ہے کیوں کہ اس فارمیٹ سے یہ کھیل مزید دلچسپ ہوسکتا ہے۔ کرمانی نے یاد دلایا کہ پہلے صرف ٹسٹ میچس کھیلے جاتے تھے۔ 1975 ء میں پہلی مرتبہ 60 اوورس کے ایک روزہ میچس شروع ہوئے جس کے بعد 50 اوورس کا طریقہ کار رائج ہوا اور اب انتہائی دلچسپ و سنسنی خیز T-20 فارمیٹ چل پڑا ہے۔ کرمانی نے جو حالیہ منعقدہ معین الدولہ گولڈ کپ کرکٹ ٹورنمنٹ کے ضمن میں یہاں پہونچے تھے یہ بھی یاد دلایا کہ معین الدولہ ٹورنمنٹ نے انھیں اس کھیل کی بلندیوں تک رسائی کا موقع فراہم کیا۔ انھوں نے کہاکہ دور حاضر کے کسی بھی کرکٹر کو وہ بہترین کھلاڑی قرار نہیں دے سکتے۔ ہاں ! سچن تنڈولکر اگر ریٹائر نہ ہوتے تو غالباً اُنھیں بہترین کھلاڑی کہا جاسکتا تھا۔ اُنھوں نے وجہ بیان کرتے ہوئے کہاکہ دور حاضر کے کرکٹ میں روز مرہ کئی تبدیلیاں رونما ہوا کرتی ہیں۔ ہر کھلاڑی کا اپنا منفرد انداز ہوا کرتا ہے۔ چنانچہ ان کھلاڑیوں کا ایک دوسرے سے تقابل کرنا دشوار ہوتا ہے۔ اُنھوں نے کہاکہ موجودہ دور میں کسی کھلاڑی کو اُس کے کھیل کی تکیک اور انداز پر نہیں پرکھا جاتا بلکہ اس کے کھیل کے نتیجہ کو دیکھا جاتا ہے۔ یہ بھی نہیں دیکھا جاتا کہ کسی کھلاڑی کی بیٹنگ، بولنگ، فیلڈنگ یا وکٹ کیپنگ تکنیک کیا ہے۔ صرف اور صرف کسی کھلاڑی کے نتیجہ کو ہی دیکھا جاتا ہے جو اگرچہ ایک اچھی علامت ہے۔ لیکن مناسب تکنیک سے کھیلنے والا کھلاڑی تکنیک کے بغیر کھیلنے والے کھلاڑی سے بہرحال بہتر ہوتا ہے۔ سید کرمانی نے کہاکہ اُن کے دور اور موجودہ کرکٹ میں زمین آسمان کا فرق آگیا ہے۔

TOPPOPULARRECENT