Monday , November 19 2018
Home / شہر کی خبریں / مستقبل کی جوہری توانائی پر اسکولی طلبہ میں مقابلہ

مستقبل کی جوہری توانائی پر اسکولی طلبہ میں مقابلہ

حیدرآباد۔4 اپریل(سیاست نیوز)مستقبل کی جوہری توانائی کے عنوان کے تحت اسکولی طلبہ کیلئے ڈرائنگ مقابلہ منعقد کیا گیا تھا، جن میں توانائی کی اہمیت اور توانائی کی اہمیت کے بارے میں شعور پیدا کرنے اور ایٹمی توانائی سے منسلک غلط فہمیوں کو دور کرنے کے لئے ایک واضح ذہن تیار کرنا ہے۔ مقابلہ کا موضوع ’’مستقبل کا جوہری توانائی‘‘ رہا اور یہ ہندوستان کا نیوکلیئر پاور کارپوریشن (این پی سی آئی ایل) کی جانب سے منظم کیا گیا تھا۔ اس مقابلے میں مجموعی طور پر 285 طلباء نے میں حصہ لیا اور فاتح طالب علموں کا انتخاب مشہور شخصیاتوں کی طرف سے فیصلہ کیا گیا ہے۔مقابلے جیتنے والے طالب علم ساتویں جماعت کے شیٹل راو اور دوسرا انعام پانے والے فاتح راجش جوسو رہے جن کا تعلق چھٹی جماعت سے تھا۔یاد رہے کہ ہندوستان بھر کی کئی ریاستوں میں بہت سے ایسے پروگرام منظم کیے جا رہے ہیں جن کے ذریعہ جوہری توانائی کے بارے میں آگاہی پیدا کرنا ، آلودگی سے پاک توانائی کے ذریعہ اور جوہری توانائی کے بارے میں غلط تصورات کو دور کرنے اس کا مقصد ہے۔ہندوستان میں، فی الحال ایٹمی توانائی کی پیداوار 6780 میگاواٹ کی مقدار ہے اور 2023 ء تک 20,000، میگاواٹ تک پہنچنے کی منصوبہ بندی کی جائے گئی۔

TOPPOPULARRECENT