Friday , December 15 2017
Home / شہر کی خبریں / مسجد یکخانہ چھتری ناکہ کو آباد کرنے اقدامات کا تیقن

مسجد یکخانہ چھتری ناکہ کو آباد کرنے اقدامات کا تیقن

جناب امجد اللہ خان کی چیف اکزیکٹیو آفیسر وقف بورڈ سے نمائندگی
حیدرآباد۔12فروری(پریس نوٹ) چیف اکزیکٹیو آفیسر تلنگانہ اسٹیٹ وقف بورڈ جناب محمد اسد اللہ نے سابق کارپوریٹر اعظم پورہ‘ مجلس بچائوتحریک جناب امجد اللہ خان خالد کو یہ تیقن دیا کہ وہ چھتری ناکہ لال دروازہ میں واقع مسجد یکخانہ کو آباد کرنے کیلئے فوری قدم اٹھائیں گے۔وہ جناب اسد اللہ سے ملاقات کرتے ہوئے انہیں ایک یاداشت پیش کی۔ جس میں انہوں نے  خواہش کی کہ وہ متذکرہ مسجد کی مرمت ‘ آہک پاشی اوراس غیر آباد مسجد کو آباد کرنے کیلئے ضروری اقدامات کریں۔ اس مسجد کے تحفظ کیلئے اس کی حصار بندی کا کام بھی کروائیں۔انہوں نے 22ڈسمبر 2015 کو پرنسپال سکریٹری محکمہ اقلیتی بہبود و اسپیشل آفیسر تلنگانہ اسٹیٹ وقف بورڈ جناب سید عمر جلیل آئی اے ایس سے نمائندگی کی گئی تھی اور انہیں اس بات سے واقف کرایا گیا ۔لہذا مسجد کی اراضی پر غیر مجاز قبضہ کے انسداداور غیر قانونی تعمیر کردہ اس عمارت کے انہدام کیلئے فوری طورپر قدم اٹھایا جائے۔ان کی نمائندگی پر وقف بورڈ اور چھتری ناکہ پولیس نے مشترکہ طورپر تیز رفتار کاروائی کی تھی اور مسجد کی اراضی پر اس غیر مجاز قبضہ کو رکوادیا گیا تھا ۔مذکورہ غیر مسلم شخص نے اس کی جانب سے مسجد کی اراضی پر غیر قانونی طورپر تعمیر کردہ عمارت کو خود ہی منہدم کردیا تھا ۔لیکن اس مسجد کو آباد کرنے کیلئے وقف بورڈ کی جانب سے تاحال کوئی کاروائی نہیں کی گئی ہے۔سابق کارپوریٹر مجلس بچائو تحریک نے سی ای او وقف بورڈ سے کہا کہ اس مسجد کی آہک پاشی اور حصار بندی کا کام فوری طورپر انجام دیں تاکہ یہ مسجد دوبارہ آباد ہوسکے اور محلہ میں رہنے والے لوگ اس مسجد میں نماز ادا کرسکیں۔سی ای او وقف بورڈ نے انہیں یقین دلایا کہ وہ اس مقصد کیلئے حکومت تلنگانہ سے درکار رقم کی منظوری کو یقینی بنائیں گے۔

TOPPOPULARRECENT